دیوبند

سی۔ بی۔ ایس ۔سی ۔بورڈ کے ہائی اسکول کے نتائج میں طلبہ وطالبات نے کیا اچھا مظاہرہ

اسپرنگ ڈیل پبلک اسکول ، دون ویلی پبلک اسکول اور نواز گرلز پبلک اسکول کی طالبات کے نتائج شاندار رہے

دیوبند، 15؍ جولائی (رضوان سلمانی) سی۔ بی۔ ایس ۔سی ۔بورڈ کے ہائی اسکول کے نتیجہ کا دوپہر کے بعد اعلان کیاگیا۔ جس میں دیوبند اور اطراف کے عصری تعلیمی اداروں کے طلبہ وطالبات نے شاندار مظاہرہ کیا۔ خاص طورپر اسپرنگ ڈیل پبلک اسکول ، دون ویلی پبلک اسکول اور نواز گرلز پبلک اسکول کی طالبات کے نتائج شاندار رہے۔ دون ویلی پبلک اسکول کی ہونہار طالبہ شریا سنگھل 99.2فیصد نمبرحاصل کرکے ضلع ٹاپر بنیں۔ دیوبند کے قدیم عصری تعلیم کے معروف ادارہ اسپرنگ ڈیل پبلک اسکول کے نتائج بھی صد فیصد رہے۔ ادارہ کے پرنسپل ڈاکٹر ساجد علی نے بتایا کہ ادارہ کے طالب علم ساحل انصاری 92فیصد نمبر حاصل کرکے پہلے مقام پر ، محمد عظیم 87فیصد نمبرات کے ساتھ دوسرے اور 85فیصد نمبرات کے ساتھ زوہا خان تیسرے مقام پر رہیں۔ادارہ کے چیئرمین سعد صدیقی اور کو چیئرمین احمد صدیقی نے بچوں کو مبارک باد دیتے ہوئے ان کے روشن مستقبل کی دعا کی۔

انہو ں نے کہا کہ ہم مستقبل میں اس سے بھی بہتر نتائج لائیں گے ۔ چیئرمین سعد صدیقی نے اسکول کے اسٹاف کو ریزلٹ کی مبارک باد دی اور نتائج پر خوشی کا اظہار کیا۔ وہیں دوسری جانب نواز گرلز پبلک اسکول کا نتیجہ صد فیصد رہا اور تمام طالبات امتیازی نمبرات کے ساتھ کامیاب ہوئیں۔ ادارہ کی طالبہ زویا احمد 95.2فیصد نمبر حاصل کرکے کالج ٹاپر رہیں۔ اس کے علاوہ حیا زبیر 95فیصد نمبرات کے ساتھ دوسرے مقام پر اور آمنہ عثمانی 94فیصد نمبرات حاصل کرکے تیسرے مقام پر رہیں۔ ادارہ کی دیگر طالبات نے شفاخان نے 93فیصد، اریبہ چودھری نے 91.2فیصد نمبرات حاصل کرکے چوتھا اور پانچواں مقام حاصل کیا۔ ادارہ کے انچارج عبداللہ نواز اور پرنسپل فوزیہ خان نے بتایا کہ اس سال ہائی اسکول کے بورڈ امتحان میں 52طالبات نے شرکت کی تھی۔ جن میں سے 38طالبات نے ہندی مضمون میں ڈسٹنکشن حاصل کی ہے۔ جبکہ انگریزی مضمون میں 16ریاضی میں 14سائنس میں 10سوشل سائنس میں 16اور کمپیوٹر میں 39طالبات نے ڈسٹنکشن سے کامیابی حاصل کی۔ انھوںنے بتایا کہ مضامین کے اعتبار سے ہندی میں آمنہ عثمانی نے 99، انگریزی میں حیازبیر نے 97،ریاضی میں شفا نے 96، سائنس میں حیا نے 92اور سوشل سائنس میں زویااحمد، حیازبیر، شیزا فردین اور اریبہ چودھری نے 95اور کمپیوٹر میں لبابہ صدیقی نے 99نمبر حاصل کئے۔ ادارہ کے منیجر ڈاکٹر نواز دیوبندی نے کامیاب طالبات اور ان کے والدین کو مبارکباددیتے ہوئے کہا کہ محنت اور لگن نے یہ ثابت کردیاہے کہ متوسط اور غریب خاندانوں سے تعلق رکھنے والی طالبات بھی نئے نئے ریکارڈ قائم کرسکتی ہیں۔

انھوں نے کہا کہ طالبات کے اسی طرح کے مقاصد کو پورا کرنے کے لئے نوازگرلز پبلک اسکول کا قیام عمل میں لایاگیا۔ انھوں نے کہا کہ یہ خوشی کا مقام ہے کہ ہماری بیٹیاں، والدین اور خاص طورپر تدریسی عملہ تعلیمی مقاصد کو پورا کرنے کے لئے ایک دوسرے کے ساتھ مل کر کام کررہے ہیں۔ وہیں دوسری جانب دون ویلی پبلک اسکول کا رزلٹ بھی نہایت شانداررہا۔ ادارہ کی پرنسپل نے بتایا کہ ان کے ادارہ کی طالبہ شریا سنگھل نے 500میں سے 496(99.2%)نمبرات حاصل کرکے ضلع سہارنپور میں پہلا مقام حاصل کیاہے۔ جبکہ دیوانش پرتاب نے 98.4فیصد نمبرات کے ساتھ دوسرا مقام اور کنشکا تیاگی و ارچت گاندھی نے 97.8فیصد نمبرات حاصل کرکے مشترکہ طورپر تیسرا مقام حاصل کیا۔

ادارہ کے چیئرمین راج کشور گپتا نے بتایا کہ ہائی اسکول کے نتائج صد فیصد رہے ہیں۔ شہر کے ایک دوسرے عصری تعلیم کے ادارہ دون ہلس اکیڈمی میں بھی ہائی اسکول کے نتائج صد فیصد رہے ہیں۔ اس ادارہ کے دھروسنگھل نے 97.2فیصد نمبر حاصل کرکے پہلامقام حاصل کیا۔ جبکہ انوراگ چودھری 94.3فیصد نمبرات کے ساتھ دوسرے مقام پر اور پرنسی 92.3فیصد نمبرات حاصل کرکے تیسرے مقام پر رہیں۔ اسی طرح آرکے پبلک اسکول کا رزلٹ بھی 100فیصد رہا۔ اس ادارہ کے طالب علم محمد زید 90 فیصد نمبر حاصل کرکے اسکول ٹاپر بنے۔ جبکہ آروہی تیاگی اور شورین باالترتیب دوسرے اور تیسرے مقام پر رہے۔ جی ٹی روڑ پر واقع سرودے گیان پبلک اسکول میں بھی طلبہ نے شاندار کارکردگی کا مظاہرہ کیا۔ ادارہ کے روہت سینی 94.6فیصد نمبر لے کر اسکول ٹاپر بنے۔ ا ن کے علاوہ اننت تیاگی، خوشی پنڈیر، آدتیہ کمار، بلال احمد اور آصف نے امتیازی نمبر حاصل کرکے اسکول کا نام روشن کیا۔ شہر کے ایک دوسرے معروف ادارہ بینیسن اسکول کے نتائج بھی بہترین رہے۔ ادارہ کے پرنسپل شری کانت چودھری نے بتایا کہ حمدہ حسین94.4فیصد نمبر کے ساتھ پہلے مقام پر، آمنہ علی 91.8فیصد نمبرات کے ساتھ دوسرے مقام پر اور طوبی90.6فیصد نمبرات کے ساتھ تیسرے مقام پر رہے۔ ادارہ کے منیجر ندیم چودھری اور ڈاکٹر شائستہ چودھری نے تمام کامیاب بچوں کو مبارکباد دی۔ وہیں نوبل انٹر نیشنل اکیڈمی کے پرنسپل پروین تیاگی نے بتایا کہ ان کے ادارہ کی طالبہ دکشہ 91.6فیصد نمبر حاصل کرکے اسکول ٹاپر بنیں۔ جبکہ ارجن تیاگی دوسرے مقام پر اور شگن تیسرے مقام پر رہے۔ اس کے علاوہ دیگر اداروں کے نتائج بھی شاندار رہے۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

متعلقہ خبریں

Back to top button
Close
Close