دہلی

دہلی ہائی کورٹ نے لاک ڈاؤن کی درخواست پر دیا اہم فیصلہ: کیا پھر سے ہوگا لاک ڈاؤن؟

نئی دہلی 23نومبر(آئی این ایس انڈیا) دہلی ہائی کورٹ نے اس درخواست کو خارج کردیاہے جس میں ریاست میں بڑھتے ہوئے کوروناکیسوں کے پیش نظر لاک ڈاؤن کامطالبہ کیاگیاتھا۔ عدالت نے درخواست گزارکوبتایاہے کہ اس معاملے میں نہ توعدالت کی مداخلت کی ضرورت ہے اور نہ ہی اس درخواست کی سماعت ہوئی۔عدالت نے درخواست گزار سے یہ سوال پوچھاہے کہ کیاہائی کورٹ ریاست میں لاک ڈاؤن نافذکرنے کے لیے ہدایات جاری کرسکتی ہے؟ عدالت نے مزیدکہاہے کہ کسی ریاست میں لاک ڈاؤن مسلط کرنے کافیصلہ حکومت لیتی ہے۔اس کے لیے ایک پالیسی سازادارہ ہے۔ ایسے معاملات میں حکومت کویہ بھی فیصلہ کرناہوتاہے کہ ریاست میں کیا نافذ کیا جانا چاہیے اورصورتحال سے نمٹنے کے لیے کیانہیں کیاجاناچاہیے۔درخواست گزار کی دلیل یہ تھی کہ دہلی میں روزانہ مرنے والوں کی تعدادبڑھتی جارہی ہے۔ نیز کوروناسے متاثرافرادکی تعدادبھی مسلسل بڑھ رہی ہے۔ ایسی صورتحال میں دہلی میں کورونا کے تیسرے دور کوروکنے کے لیے دارالحکومت میں لاک ڈاؤن ڈالنے کی اشد ضرورت ہے۔تاہم عدالت درخواست گزارکے دلائل سے اتفاق نہیں کرتی ہے۔ عدالت کاخیال تھاکہ دہلی حکومت لاک ڈاؤن سے عائدکرنے یانہ کرنے سے متعلق فیصلہ لینے کی اہل ہے۔ ایسے معاملے میں دہلی عدالت میں مداخلت کرنے کی ضرورت نہیں ہے۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

Leave a Reply

متعلقہ خبریں

Back to top button
Close
Close