دہلی

دہلی میں فرضی کال سینٹر کا انکشاف ، 13 ملزمان پولیس کے ہتھے چڑھ گئے

دہلی ، 4اگست (ہندوستان اردو ٹائمز) جنوب مشرقی ضلع پولیس کے سائبر ونگ نے بدھ کے روز دہلی میں فرضی بین الاقوامی کال سینٹر چلانے اور بیرون ملک مقیم ہندوستانیوں کو دھوکہ دے کر موٹی رقم ٹھگنے کے الزام میں 13 لوگوں کو گرفتار کیا ہے۔ پولیس کے مطابق یہ لوگ بیرون ملک مقیم ہندوستانیوںسے ساتھ بات چیت کرنے کے لیے کمپیوٹر اور دیگر آلات نصب کیے تھے، اور ملزمان نے مبینہ طور پر اہلکار بتاتے ہوئے پیسے مانگے۔

پولیس نے کہا کہ ان کے قبضے سے 20 موبائل فون، 11 کمپیوٹر مانیٹر، 11 سی پی یو، 11 کی بورڈ، 10 ہیڈ فون، ایک وائی فائی راؤٹر، ایک مہندرا تھار اور ایک i-20 کار برآمد ہوئی ہے ۔پولیس نے مزید کہا کہ جب اس مقام پر چھاپہ مارا گیا تو ملزمان بیرون ملک مقیم ہندوستانیوں سے بات کر رہے تھے۔ کیس کے بعد پی ایس سائبر پولیس اسٹیشن میں تعزیرات ہند (آئی پی سی) کی متعلقہ دفعات کے تحت ایف آئی آر درج کی گئی۔اس سلسلے میں مزید تفتیش جاری ہے۔

ڈپٹی کمشنر آف پولیس (ساؤتھ ایسٹ) ایشا پانڈے نے کہا کہ مسلسل پوچھ گچھ پر ملزمین نے انکشاف کیا کہ وہ بیرون ملک رہنے والے ہندوستانیوں (این آر آئی) کے ساتھ بات چیت کرتے تھے تاکہ انہیں متعلقہ ملک کے پولیس یا سرکاری عہدیداروں کی شکل دے کر انہیں دھوکہ دیا جا سکے۔وہ انہیں بتاتے تھے کہ ان کا قومی شناختی نمبر مجرمانہ سرگرمیوں میں ملوث پایا گیا ہے اور اگر وہ ان مجرمانہ الزامات سے بری ہونا چاہتے ہیں تو انہیں جرمانے کے طور پر ایک خاص رقم ادا کرنا ہوگی۔ متاثرین انہیں نقد رقم کے ذریعے ادائیگی کرتے تھے۔

ہماری یوٹیوب ویڈیوز

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button