بین الاقوامیعجیب و غریب

دو سگی بہنوں کی اچانک موت

آسٹریلوی پولیس نے جن دو سعودی بہنوں کو ان کے اپارٹمنٹ میں7 جون کو مردہ حالت میں پایا تھا ۔ پولیس نے ان کی موت کے سلسلے میں کوئی پیش رفت نہ ہونے کا اعلان کر دیا ہے۔ یہ ایک غیر معمولی صورت حا ل تھی۔ جس پر پولیس نے عوام سے اپیل کی تھی کہ اگر وہ اس بارے میں کچھ جانتے ہوں تو پولیس کو اطلاع کریں۔

تاہم بدھ کے روز پولیس نے ان دونوں بہنوں کی شناخت کا اعلان کیا ہے کہ دونوں سعودی بہنوں میں سے ایک 24 سالہ اسریٰ عبداللہ السہلی اور دوسری 23 سالہ امل عبداللہ السہلی ہیں۔ واضح رہے پولیس نے ان کی ‘ڈیڈ باڈیز’ سات جون کو ان کے اپارٹمنٹس سے قبضے میں لی تھیں۔

مگر دونوں کے جسم پر کسی قسم کا کو زخم کا نشانہ تھا نہ کوئی ظاہری علامت پائی گئی تھی جسے دونوں کی اچانک موت کا سبب کہا جا سکتا۔

جب پولیس نے دونوں کی ‘ڈیڈ باڈیز’ حاصل کیں تو اسی وقت ایک کرائم سین تفتیش کی غرض سے تیار کیا گیا تھا۔ اور دونوں کے فرنزک نمونے بھی لے لیے گئے تھے تاکہ دونوں کی اس اچانک موت کے سبب تک پہنچنے کی کوشش کی جاسکے۔

لیکن پولیس کے بقول ان تمام کوششوں اور تفتیش کے باوجود یہ معلوم نہیں ہو سکا ہے کہ دونوں کی موت کیسے واقع ہوئی۔ البتہ یہ معلوم کیا گیا ہے کہ موت سات جون سے کچھ وقت پہلے ہوئی تھی۔ پولیس کی طرف سے اس بارے میں ایک عوامی اپیل بھی جاری کی گئی تھی کہ اگر کوئی بھی فرد ان کے بارے میں کچھ جانتا ہو آگاہ کرے۔

اس معاملے میں برووڈ کے مقامی علاقے کی کرائم مینیجراور تفتیشی انسپیکٹر کلاوڈیا آلکروفٹ کا کہنا ہے کہ ‘ وہ اس کیس کے بارے میں کسی ایسے فرد سے بات کرنے میں دلچسپی رکھتی ہیں جو ان دونوں کے بارے میں کوئی معلومات رکھتا اور ان کی آمدو رفت سے آگاہ رہا ہو۔ ‘

تدتیشی انسپیکٹر کا کہنا ہے کہ ان کا یقین ہے کہ دونوں سعودی بہنوں کی موت کسی وقت ماہ مئی میں ہوئی ہے۔ سڈنی میں سعودی قونصل خانے کا کہنا ہے کہ اس کی طرف سے ماہ جون میں آسٹریلیا کے متعلقہ حکام سے واقعے کے بارے میں رابطے کیے گئے تاکہ اس دوہری موت کے معاملے کا کچھ سراغ مل سکے۔

ہماری یوٹیوب ویڈیوز

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button