کھیل

دنیش کارتک : دس کپتانوں کی کپتانی میں کھیل چکے ہیں، ہاردک کا گیارہواں نام

نئی دہلی ، 21 جون (ہندوستان اردو ٹائمز) دنیش کارتک کی 37 سال کی عمر میں ہندوستانی ٹیم میں واپسی ہوئی ہے۔ آئی پی ایل 2022 میں کمال کرنے کے بعد کارتک نے جنوبی افریقہ کے خلاف ٹی 20 سیریز میں بھی اچھی بلے بازی کی ہے اور اب بہت سے تجربہ کاروں کا خیال ہے کہ کارتک کا ٹی 20 ورلڈ کپ میں بھی کھیلنا یقینی ہے۔ دنیش کارتک نے 2004 میں بین الاقوامی کریئر کا آغاز کیا۔ اس کے بعد وہ مسلسل ٹیم سے باہر ہوتے رہے ،لیکن ہمت نہیں ہاری۔ اسی جذبے کی وجہ سے کارتک ایک بار پھر ٹیم انڈیا میں جگہ بنانے میں کامیاب ہو گئے ہیں۔

کارتک اب تک دس ہندوستانی کپتانوں کے ساتھ کھیل چکے ہیں اور ہاردک پانڈیا ہندوستانی ٹیم کی نمائندگی کرنے والے کارتک کی قیادت میں 11ویں ہندوستانی کپتان ہوں گے۔ یہاں ہم ان تمام دس کپتانوں کے بارے میں بتا رہے ہیں۔راہل دراوڑ نے 2003 سے 2007 تک ہندوستان کی ٹیسٹ ٹیم کی کپتانی کی اور 25 میچوں میں ٹیم انڈیا کی نمائندگی کی۔ تاہم دراوڑ کا بطور کپتان ریکارڈ کچھ خاص نہیں تھا اور انہوں نے 2007 کے ورلڈ کپ میں بنگلہ دیش کے خلاف ہندوستان کی شکست کے بعد کپتانی چھوڑ دی۔ ون ڈے میں انہوں نے 2000 سے 2007 تک کپتانی سنبھالی اور اس دوران دنیش کارتک نے بین الاقوامی کرکٹ میں ڈیبیو کیا۔ راہل دراوڑاب ہندوستانی ٹیم کے ہیڈ کوچ بن گئے ہیں۔سورو گنگولی نے 2000 سے 2005 کے درمیان کل 49 ٹیسٹ میچوں میں ہندوستان کی کپتانی کی۔

اس دوران اس نے 21 میچ جیتے جب کہ بھارت کو 13 میچوں میں شکست کا منہ دیکھنا پڑا۔ اس کے ساتھ ہی 15 ٹیسٹ میچ ڈرا ہوئے۔ وہیںونڈے میں گنگولی نے 1999 سے 2005 تک ہندوستانی ٹیم کی قیادت کی اور 146 میں سے 76 میچ جیتے۔ ان کی ٹیم کو 65 میں شکست کا سامنا کرنا پڑا اور پانچ میچ بے نتیجہ رہے۔ گنگولی اب بی سی سی آئی کے صدر بن چکے ہیں۔سہواگ ہندوستانی ٹیم کے باقاعدہ کپتان نہیں تھے ،لیکن ضرورت پڑنے پر ٹیم کی قیادت بھی کرتے تھے۔ سہواگ نے 2003 سے 2012 کے درمیان 12 ون ڈے میچوں میں ہندوستان کی کپتانی کی۔ ہندوستان نے ان میں سے سات میچ جیتے اور پانچ ہارے۔ اس دوران کارتک بھی ٹیم انڈیا کے رکن تھے۔ سہواگ اب کمنٹری کرتے ہیں۔

انیل کمبلے بھی طویل عرصے تک ہندوستان کے کپتان نہیں رہے۔ وہ ہندوستان کے قدیم ترین کپتانوں میں سے ایک ہیں۔ کمبلے کی کپتانی میں ہندوستان نے 14 میچ کھیلے اور تین میں فتح حاصل کی۔ اس کے ساتھ ہی ٹیم کو پانچ میں شکست کا منہ دیکھنا پڑا۔ چھ میچ ڈرا ہوئے۔کمبلے ہندوستانی ٹیم کے ہیڈ کوچ رہ چکے ہیں اور اس وقت آئی پی ایل میں پنجاب کنگز ٹیم کے ہیڈ کوچ ہیں۔ہندوستان کے کامیاب ترین کپتان سمجھے جانے والے مہندر سنگھ دھونی کی ٹیم میں دنیش کارتک نے بھی کئی میچ کھیلے۔ دھونی نے کل 331 میچوں میں ہندوستان کی کپتانی کی اور 178 میچ جیتے جن میں 60 ٹیسٹ، 199 ون ڈے اور 72 ٹی ٹوئنٹی شامل ہیں۔ انہوں نے ٹیم انڈیا کو 27 ٹیسٹ، 110 ون ڈے اور 41 ٹی 20 میچوں میں فتح دلائی۔

دھونی نے بھی دو سال قبل انٹرنیشنل کرکٹ سے ریٹائرمنٹ لے لی ہے اور وہ صرف آئی پی ایل کھیل رہے ہیں۔ویراٹ کوہلی کا شمار بھی ہندوستان کے کامیاب ترین کپتانوں میں ہوتا ہے۔کوہلی نے 66 ٹیسٹ میچوں میں ہندوستان کی کپتانی کی، جس میں ہندوستان کو 39 میں فتح دلائی۔ اس کے ساتھ ہی 95 ون ڈے میچوں میں ویراٹ نے اپنی ٹیم کے لیے 65 جیتے۔ T20 میں 50 میچوں میں کپتانی کرنے والے وراٹ نے ہندوستان کو 30 جیت دلائی۔ ویراٹ نے بھی اب تینوں فارمیٹس میں کپتانی چھوڑ دی ہے اور وہ بلے باز کے طور پر کھیل رہے ہیں۔

سریش رائنا ہندوستان کے باقاعدہ کپتان نہیں تھے لیکن انہوں نے دھونی کی غیر موجودگی میں کئی بار ٹیم انڈیا کی کمان سنبھالی۔ ان کی کپتانی میں ہندوستان نے نو میچ کھیلے۔ ان میں سے چار جیتے جبکہ پانچ میں شکست ہوئی۔ کارتک بھی رینا کی قیادت میں ٹیم کا حصہ تھے۔ رائنا بھی اب انٹرنیشنل کرکٹ سے ریٹائر ہو چکے ہیں اور اس بار وہ آئی پی ایل میں کمنٹری کرتے نظر آتے ہیں۔دنیش کارتک بھی موجودہ ہندوستانی کپتان روہت شرما کی قیادت میں میچ کھیل چکے ہیں۔ جب دنیش کارتک نے بین الاقوامی کرکٹ میں اپنے کیریئر کا آغاز کیا۔ اس وقت روہت اسکول کے لیے کرکٹ کھیلا کرتا تھا۔

اب روہت ٹیم انڈیا کے کپتان بن چکے ہیں، لیکن کارتک اب بھی کھیل رہے ہیں۔اجنکیا رہانے ویراٹ کوہلی کی غیر موجودگی میں کئی بار ٹیسٹ ٹیم کی کمان سنبھال چکے ہیں۔ وہ ٹی 20 میں ٹیم انڈیا کی کپتانی بھی کر چکے ہیں۔ کارتک بھی رہانے کی ٹیم کا حصہ رہ چکے ہیں۔ رہانے اب تینوں فارمیٹس میں ہندوستانی ٹیم کا حصہ نہیں ہیں۔ ون ڈے اور ٹی ٹوئنٹی میں بھی ان کی واپسی کا کوئی امکان نہیں ہے،تاہم کارتک T20 کھیل رہے ہیں۔ہندوستان کے سب سے کم عمر ٹی ٹوئنٹی کپتانوں میں سے ایک رشبھ پنت نے حال ہی میں ہندوستانی ٹیم کی کمان سنبھالی اور اسی سیریز میں دنیش کارتک ایک بار پھر بین الاقوامی کرکٹ میں واپس آئے۔ ابھی ٹیم انڈیا میں پنت کی جگہ یقینی نہیں ہے، لیکن کارتک کا ورلڈ کپ طے مانا جا رہا ہے۔ہاردک پانڈیا دورہ آئرلینڈ پر ہندوستانی ٹیم کی کپتانی کریں گے اور وہ 11ویں کھلاڑی ہوں گے جن کی کپتانی میں دنیش کارتک ہندوستان کے لیے میچ کھیلیں گے۔

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button