حیدرآباد

کے سی رائو،تلنگانہ کی کمان فرزند کے حوالے کریں گے؟

حیدرآباد21جنوری(آئی این ایس انڈیا) وزیراعلیٰ کے چندر شیکھر راؤریاست کی کمان اپنے بیٹے اور کابینہ کے وزیرکے ٹی راما راؤکے حوالے کرسکتے ہیں۔اس موقع پرجاوزیر تلسانی سرینواس یادو نے اس امکان پر کھل کر بات کی۔ شہر میں منعقدہ ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ کے ٹی آر کو وزیراعلیٰ بننے میں کوئی غلط بات نہیں ہے ، کیونکہ وہ پہلے ہی ٹی آر ایس کے صدر رہ چکے ہیں۔ سرینواس نے کہاہے کہ کے سی آر مناسب وقت پر (کے ٹی آر کو سی ایم بنانے پر) فیصلہ لیں گے۔ پچھلے چھ سالوں میں ان کے تمام فیصلے درست ثابت ہوئے ہیں۔

ٹی آر ایس کے ممبر اسمبلی شکیل احمد نے کہاہے کہ وہ کے ٹی آر کو اگلے اسمبلی اجلاس (فروری یا مارچ کے شروع میں بجٹ اجلاس) کی سربراہی کرتے ہوئے دیکھناچاہیں گے۔کے سی رائوجواویسی کے قریبی سمجھے جاتے ہیں،کی حکومت میں چارمساجدشہیدکی گئیں،جب اس پراحتجاج ہواتواکتوبرکے پہلے ہفتہ میںسکریٹریٹ کی دومساجدپرکام کاوعدہ کیاگیا،لیکن چارمہینے ہوگئے،اویسی برادران کے ساتھ ساتھ حکومت مکمل خاموش ہے۔

اویسی ،لوک سبھاالیکشن میں کے سی رائوکووزیراعظم امیدواربتارہے تھے۔جس طرح اویسی دیگرعلاقائی پارٹیوں پربرہم رہتے ہیں،لیکن کے سی رائوکے خلاف مجلس دفاع کرنے لگتی ہے۔جس ا سمبلی میں مجلس کے سات بہادرتھے،وہاں سے بابری مسجدکی شہادت میں بدنام ہوئے نرسمہارائوکوبھارت رتن دینے کی تجویزمنظورہوجاتی ہے لیکن آج تک اویسی نے انھیں سنگھی نہیں کہاہے۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

متعلقہ خبریں

Back to top button
Close
Close