عجیب و غریب

سائبرکرائم میں روزبہ رو زاضافہ‘ سوشیل میڈیا پر نت نئے طریقوں سے لوگوں کودھوکہ

حیدرآباد۔تلنگانہ (محسن خان ) وقت کے ساتھ ساتھ لوگوں کوٹھگنے کے طریقے بدلتے جارہے ہیں۔ موجودہ دورمیں جہاں ٹکنالوجی عام ہوگئی ہے اور تمام کام آن لائن انجام پا رہے ہیں۔ چھوٹی سی چھوٹی چیز آن لائن خریدی جارہی ہے اورا س کی رقم کی ادائیگی بھی آن لائن ہورہی ہے۔ پیسے نکالنے کیلئے بینک جانے کی ضرورت نہیں ہے سب نیٹ بینکنگ پرہورہا ہے اور ہرچیز OTPپرمنحصرہوگئی ہے۔ ایسے میںجعل ساز اور مجرمانہ ذہن رکھنے والے افراد معصوم لوگوں کودھوکہ دینے کیلئے ٹکنالوجی کا سہارا لے رہے ہیں ۔حال ہی میں پیش آئے ایک واقعہ میں حیدرآباد کے مشہور ادیب ‘ماہرتعلیم اور موٹیویشنل اسپیکر فاروق طاہر کے نام اور فو ٹو کا غلط استعمال کیاگیا اور ان کے نام سے فیس بک پرایک نئی آئی ڈی بناکر لوگوں کوفرینڈ ریکویسٹ بھیجی گئی اور چندلوگوں نے اس نئی آئی ڈی کوقبول کرلیا۔ بعدازاں ا س نقلی آئی ڈی سے فاروق طاہرکے نام سے لوگوں سے پیسے مانگے گئے۔ راقم الحر وف کوبھی اس آئی ڈی سے پیسوں کی مدد کیلئے مسیج آیا ۔ جس پرفاروق طاہر کو بروقت اطلاع دی گئی۔ فاروق طاہرنے اس جعل ساز کے مسیجس کا اسکرین شاٹ لیکرفیس بک پر سب ساتھیوں کو اطلاع دیدی اورالرٹ کردیا۔چند منٹوں میں فیس بک پر کئی لوگوں کی شکایت درج ہونے پریہ آئی ڈی بند ہوگئی۔ ماہرین نے اس تعلق سے بتایاکہ لوگوں کودھوکہ دینے کیلئے نت نئے طریقے استعمال کیے جارہے ہیں۔ فیس بک پرپہلے سے ایڈ شخص کی اگرنیوآئی ڈی سے فرینڈ ریکسویٹ آتی ہے تو متعلقہ شخص کوفوری اطلاع دیں اور گوگل پے کے لیے یا دوسرے کسی مدد کیلئے کوئی کال آتا ہے تو فوراً ٹروکالرپر اس کوچیک کرلیں۔ حال ہی میں پولیس کے اعلیٰ عہدیداروں کی بھی آئی ڈی بناکر جونیئرآفیسروں سے پیسے مانگنے کا اسکام بھی سامنے آچکا ہے۔ اوایل ایکس اوردیگرپلیٹ فارمس سے کسی بھی قسم کی خریداری کے دوران احتیاط برتیں۔اپنی ذاتی معلومات کو کم سے کم فیس بک پرشیئر کریں۔ غیرضروری فارمس کوآن لائن نہ بھریں۔ اپنے کارڈس کی تفصیلات فون پرکسی کونہ دیں کیوںکہ بینک کبھی بھی فون کے ذریعہ تفصیلات نہیں مانگتا۔ انٹرنیٹ پرغیرضروری کے ایپس اورگیمس ڈائون لوڈ نہ کریں۔ ایس ایم ایس پرآنے والی لنک کوکلک نہ کریں۔ایاز الشیخ نے اس طرح کے واقعات پرفوراً سائبرکرائم سے رجوع ہونے کی عوام سے اپیل کی ہے ۔انہوں نے کہاکہ تلنگانہ کی سائبرکرائم پولیس اس طرح کے واقعات پرفوری نوٹ لیکر چند منٹوں میں مجرموں کوگرفتارکرلیتی ہے ۔ہم کوان واقعات کا سخت نوٹ لیتے ہوئے تمام لوگوں میں شعوربیدا رکرناچاہئے تاکہ کوئی معصوم لوگ ان آن لائن چوروں کا شکار نہ بنیں۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

Leave a Reply

متعلقہ خبریں

Back to top button
Close
Close