اہم خبریں

حکومت پیگاسس جاسوسی معاملے پر پارلیمنٹ میں بات کیوں نہیں کرنا چاہتی: ابھیشیک منو سنگھوی

نئی دہلی ،29؍جولائی (ہندوستان اردو ٹائمز ) پیگاسس کے معاملے پر پارلیمنٹ میں ہنگامہ جاری ہے۔ ایوان کی کارروائی معمول کے مطابق نہیں چل پارہی ہے۔ اس پورے معاملے پر کانگریس کے رہنما ابھیشیک منو سنگھوی نے کہا کہ ہم پر الزام لگتا ہے کہ ہم پارلیمنٹ کو نہیں چلنے دے رہے ہیں۔ ہم نے تو صرف کچھ سوالات پوچھے ہیں کہ کیا آپ نے پیگاساس ایپ خریدا یا اس کا استعمال کیاہے؟ اس کا جواب ہاں یا نہیں میں ہوسکتا ہے۔ اگر آپ نے اس کا استعمال کسی خاص شخص کے لئے کیا ہے تو اس کا نام بتائیے،اس سے زیادہ آسان زبان میں سوال نہیں ہوسکتا۔ حکومت کی طرف سے جوابات آئے ہیں، لیکن دونوں سوالوں کا ایک بھی جواب نہیں ہے۔ پہلا جواب یہ ہے کہ حزب اختلاف کا یہ سوال ایک سیاسی سازش ہے۔

دوسرا اس ملک میں کچھ اصولوں کے تحت مداخلتیں ہوتی ہیں۔ اس کے اوقات کے بارے میں بھی سوالات اٹھائے گئے ہیں، لیکن بنیادی سوال کا جواب نہیں دیا گیا ہے۔ اس طرح کے دس جواب آئے ہیں۔ یہ بھی کہا گیا ہے کہ ہم پارلیمنٹ سے باہر اس کے بارے میں بات کریں گے، لیکن پارلیمنٹ میں کیوں نہیں؟ اس پر بحث کیوں نہیں ہوتی؟ پارلیمنٹ کو جمہوریت کی روح کہا جاتا ہے، لیکن یہاں جمہوریت کی دھجیاں اڑائی جارہی ہیں۔ واضح رہے کہ پیگاسس جاسوسی کیس پر حکومت اور اپوزیشن کے مابین تصادم جاری ہے۔ صبح کے بعد سے کارروائی بار بار ملتوی ہوتی رہی ۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

Leave a Reply

متعلقہ خبریں

Back to top button
Close
Close