جموں کشمیر

والدپربیوی پرتشددکاکیس درج،عدالت کی طرف سے پابندی عائد،شہلارشیدکاپلٹ وار

جموں یکم دسمبر(آئی این ایس انڈیا) طلبا لیڈر شہلا رشید کے والد عبدالرشید نے پیر کے روز اپنی بیٹی کے خلاف سنگین الزام عائد کیا اور تحقیقات کا مطالبہ کیا۔ انہوں نے کہاہے کہ شہلا کی سماجی تنظیموں سے تفتیش کی جانی چاہیے۔ انہوں نے شہلا پر الزام لگایا کہ انہوں نے وادی کشمیر کی سیاست میں شامل ہونے کے لیے بھاری رقم لی ہے۔ شہلارشیدنے ان الزامات کی تردیدکی ہے اورکہاہے کہ والدپر گھریلو تشدد کا الزام لگایاگیاہے۔انھوں نے کہاہے کہ جس کے بعد ان کے والد اس درجے پر آگئے ہیں۔ شہلا نے اپنے والد کوبیوی کوپٹنے والااورگالی گلوچ دینے والاقرار دیاہے۔شہلارشیدنے اپنے والد کے بیان کو بے بنیاد اور بکواس قرار دیا ہے۔ شہلارشید نے بتایاہے کہ گھریلو تشدد کے معاملے میں کنبہ کے ذریعہ دائر شکایت کے بعد ایک عدالت نے 17 نومبر کواس کے والد کے سری نگر کی رہائش گاہ میں داخلے پر پابندی عائد کردی تھی۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button
Close
Close