جموں کشمیر

جموں وکشمیرانتظامیہ کے حلف نامہ پرسوال : سیف الدین سوزتوہین عدالت کی درخواست داخل کریں گے

نئی دہلی30جولائی(آئی این ایس انڈیا) کانگریس کے لیڈر سیف الدین سوز ایک بار پھر سپریم کورٹ جانے پرغورکررہے ہیں۔ سوزجموں وکشمیرانتظامیہ کے خلاف توہین عدالت کی درخواست دائر کرسکتے ہیں جس میں کہاگیاہے کہ سوزتحویل میں نہیں ہیں ، وہ آزادہیں۔ سوزنے این ڈی ٹی وی کو بتایا ہے کہ وہ اب بھی زیر حراست ہیں اور انھیں آزادانہ گھومنے کی اجازت نہیں ہے۔ سپریم کورٹ نے جموں وکشمیرانتظامیہ کی جانب سے حلف نا مہ داخل کرنے کے بعدسوز کی اہلیہ کی درخواست پرسماعت بدھ کے روزبندکردی ہے۔سیف الدین سوزکے وکیل ڈاکٹر ابھیشیک منوسنگھوی نے این ڈی ٹی وی انڈیاکوبتایاہے کہ وہ اس معاملے میں سپریم کورٹ جانے پر غور کررہے ہیں۔

ڈاکٹرسنگھوی نے کہاہے کہ حقائق اور سوز پر پابندیوں کی نوعیت کی بنیاد پر وہ مزید کارروائی کافیصلہ کریں گے۔ انہوں نے کہاہے کہ اگر یہ ثابت ہوجاتا ہے کہ سوز پرپابندی نافذ ہے تو پھر یہ عدالت میں جھوٹاحلف نامہ اورتوہین ہوگی۔در حقیقت بدھ کے روز سپریم کورٹ نے جموں و کشمیر انتظامیہ کا حلف نامہ قبول کرلیا کہ سوز آزادہیں اورتحویل میں نہیں ہیں۔سیف الدین سوزکی اہلیہ نے درخواست دائر کی ہے۔ بعدمیں سیف الدین سوز نے این ڈی ٹی وی کوبتایاہے کہ وہ اب بھی زیر حراست ہیں اورانھیں آزاد گھومنے کی اجازت نہیں ہے۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

Leave a Reply

Back to top button
Close
Close