بین الاقوامی

کروناوائرس کی دوسری لہر کا بھی امکان ہے : عالمی ادارہ صحت

نیویارک ۲۷؍ مئی ( آئی این ایس انڈیا ) عالمی ادارہ صحت نے خبردار کیا ہے کہ ابھی تک کرونا وائرس وبا کی پہلی لہر چل رہی ہے اور دنیا اس سے باہر نہیں نکلی جبکہ دوسری لہر بھی آئے گی۔ ادارے کے ایگزیکٹو ڈائریکٹر ڈاکٹر مائیک رائن نے پیر کو کہا کہ ہم عالمی سطح پر وبا کی پہلی لہر کے بیچ میں گھرے ہوئے ہیں۔ ہم ابھی تک اس مرحلے میں ہیں جس میں بیماری زور پکڑ رہی ہے۔ انھوں نے کہا کہ جنوبی امریکہ، جنوبی ایشیا اور دوسرے خطوں میں کیسز کی تعداد بڑھ رہی ہے۔ بیماری کسی بھی وقت قابو سے باہر ہوسکتی ہے۔ شمالی امریکہ، یورپ، جنوب مشرقی ایشیا اور دوسرے خطوں کو اپنے اقدامات میں نرمی کرنے میں جلدی نہیں کرنی چاہیے۔ ڈاکٹر رائن عالمی ادارہ صحت کے ہنگامی پروگراموں کے سربراہ ہیں۔

انھوں نے وبا کی دوسری لہر سے مہینوں پہلے انتباہ جاری کیا جس سے ان لوگوں کے خدشات کو تقویت ملی جو کاروبار جلدی کھولنے کی مخالفت کررہے ہیں۔ دنیا میں سب سے زیادہ کیسز اور اموات والے ملک امریکہ میں پیر کو میموریل ڈے کے موقع پر بڑی تعداد میں لوگ باہر نکلے اور ساحل سمندر اور عوامی پارکس میں دکھائی دیئے۔ جن ملکوں میں کرونا وائرس کے کیسز بڑھ رہے ہیں ان میں بھارت بھی شامل ہے۔ ایک ارب 30 کروڑ ا?بادی والے ملک میں مسلسل سات دن سے پہلے سے زیادہ کیسز سامنے آرہے ہیں۔ لگ بھگ ڈیڑھ لاکھ مریض اور 4 ہزار سے زیادہ اموات ہونے کے باوجود بھارت میں پیر کو اندرون ملک پروازیں بحال کردی گئیں۔

جنوبی امریکہ کے ملک برازیل میں بھی کیسز اور اموات میں تیزی آئی ہے اور وہ مریضوں کی تعداد کے لحاظ سے دنیا کا دوسرا بڑا ملک بن گیا ہے۔ دو دن سے برازیل میں امریکہ سے بھی زیادہ اموات ریکارڈ کی جارہی ہیں۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

جواب دیجئے

Back to top button
Close
Close