بہار و سیمانچل

بہار: مہاگٹھ بندھن میں ’رابطہ کمیٹی ‘پرتنازعہ جاری،کانگریس کی ثالثی

پٹنہ29جون(آئی این ایس انڈیا) جہاں بہارکی تمام سیاسی جماعتیں رواں سال کے آخر میں ہونے والے ممکنہ اسمبلی انتخابات کی تیاری کر رہی ہیں ، اس کے باوجودعظیم اتحادمیں جماعتوں کے درمیان ہم آہنگی کے لیے’رابطہ کمیٹی‘ کے قیام پرتنازعہ جاری ہے۔ اگرچہ کانگریس نے اس معاملے پر ایک ہفتہ کاالٹی میٹم دیا ہے ، لیکن اس معاملے پر ہندوستان عوام مورچہ (ہم) اور راشٹریہ جنتا دل (آر جے ڈی)کی کھینچی ہوئی تلوار اب بھی اپنی میان میں واپس نہیں آتی دکھائی دیتی ہے۔جب سونیا گاندھی نے عظیم اتحادمیں کوآرڈینیشن کمیٹی کی ذمہ داری سنبھالی توامیدتھی کہ اب گرینڈ الائنس میں کوآرڈینیشن کمیٹی کے ساتھ رابطہ قائم ہوگا۔

آر جے ڈی کی طرف سے ایچ اے ایم کے قومی صدر جتین رام مانجھی کی رابطہ کمیٹی کے مطالبے پر کان نہ دھرنے کے بعد ، اس بات کا امکان موجود ہے کہ کانگریس ثالثی کرے گی کہ سب کچھ ٹھیک ہوجائے گا۔ لیکن مانجھی کی دہلی سے پٹنہ واپسی اور ایچ اے ایم کی کور کمیٹی کی میٹنگ کے بعد ایک بار پھر دونوں پارٹیوں (ہم اور آر جے ڈی) کے مابین کشیدگی ہے۔ہم کے ترجمان دانش رضوان کہتے ہیں کہ سونیاگاندھی نے ، گرینڈ الائنس کی جماعتوں کے ساتھ ایک میٹنگ میں ، ایک ہفتے میں اس مسئلے کو حل کرنے کے لیے رابطہ کمیٹی کے بارے میں بات کی۔ ابھی تین دن باقی ہیں۔ تب ہی ہم کوئی فیصلہ لیں گے۔دریں اثنا آر جے ڈی اور ہم میں بھی کشیدگی بڑھتی ہوئی دیکھی گئی ہے ۔

آر جے ڈی کے مطابق اس مضحکہ خیز دعوت سے ہم حیران ہیں۔ آر جے ڈی کے ترجمان تیواری رابطہ کمیٹی کے مطالبے کو مسترد کرتے نظر آتے ہیں ، وہ کہتے ہیں کہ عظیم اتحادمیں اب تک ایسی کوئی کمیٹی تشکیل نہیں دی گئی ہے۔یہاں ، ہم کے ترجمان دانش رضوان نے آر جے ڈی رہنماؤں کو تحمل کامظاہرہ کرنے کامشورہ دیاہے۔ انہوں نے یہ بھی کہاہے کہ ہم کسی بھی بیان پر جوابی کارروائی کرنا جانتے ہیں۔ ادھرآنڈیاکانگریس کمیٹی کے ممبر اور کانگریس کے سینئر لیڈر للن کمارکاکہنا ہے کہ گرانڈ الائنس میں شامل تمام جماعتوں کو ذاتی فائدے اور نقصان سے پرے متحدرہنے کی ضرورت ہے۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

جواب دیجئے

Back to top button
Close
Close