بہارپٹنہ

بہار: سیوان میں مشتبہ حالت میں 3 لوگوں کی موت، زہریلی شراب پینے کا شبہ

پٹنہ،21؍اپریل(ہندوستان اردو ٹائمز) بہار میں سیوان ضلع کے ہردیا گاؤں میں مبینہ طور پر 3 لوگوں کی موت کا معاملہ سامنے آیا ہے۔ خدشہ ہے کہ ان تینوں کی موت مبینہ طور پر زہریلی شراب پینے کی وجہ سے ہوئی ہے۔ اس معاملے میں 19 دیگر لوگ اب بھی اسپتال میں داخل ہیں جہاں ان کا علاج چل رہا ہے۔

تاہم انتظامیہ تینوں افراد کی موت کی وجہ شراب نوشی سے ہونے کی تصدیق نہیں کر رہی ہے۔ دراصل منگل کو ضلع کے ہردیا گاؤں میں ایک ساتھ تین لوگوں کی طبیعت خراب ہوگئی تھی۔ تینوں افراد نے جسم میں درد، پیٹ میں درد اور الٹی کی شکایت کی، جس کے بعد دو لوگوں کو قریبی اسپتال میں داخل کرایا گیا، جہاں اسی دن دونوں کی موت ہوگئی۔ جبکہ تیسرے شخص کو بدھ کو اسپتال لے جایا گیا لیکن راستے میں ہی اس کی موت ہو گئی۔ تاہم متوفی کے اہل خانہ نے موت کی وجہ کے بارے میں کچھ کہنے سے انکار کیا ہے۔

پولیس نے تینوں مرنے والوں کی شناخت سندیش رام (65)، داروگا رام (58) اور راجیش رام (51) کے طور پر کی ہے۔ پولیس نے کہا کہ جو لوگ اسپتال میں داخل ہیں وہ بھی اس بات کی تصدیق نہیں کر رہے ہیں کہ انہوں نے زہریلی شراب پی تھی یا نہیں۔پولیس کو اس پورے معاملے کی اطلاع اس وقت ملی جب متوفی کے اہل خانہ نے سب کی آخری رسومات ادا کر دیں۔ پولیس کا کہنا ہے کہ تینوں مرنے والوں کے لواحقین نے پوسٹ مارٹم کرنے سے پہلے آخری رسومات ادا کیں، جس سے اس بات کی تصدیق ممکن نہیں کہ تینوں نے زہریلی شراب پی تھی۔

ہماری یوٹیوب ویڈیوز

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button