بہار و سیمانچل

حضور وقارملت جمال العلماء کا عرس اختتام پذیر : مہجورالقادری

نوادہ (پریس ریلیز ) شہزادہ وقارملت سجادہ نشیں خانقاہ قادریہ برکاتیہ رضویہ و قاضئ شہر علامہ نعمان اختر فائق جمالی مہتمم دارالعلوم فیض الباری نوادہ نے اطلاع دی کہ عالم اسلام کی مشہور شخصیت مبلغ اسلام پیر طریقت حضرت علامہ الحاج الشاہ جمال احمد قادری علیہ الرحمۃ والرضوان سابق صدرِ ادارہ شرعیہ پٹنہ اور بانی و مہتمم مرکزی اسلامی درسگاہ دارالعلوم فیض الباری نوادہ کا نواں سالانہ عرس پاک دارالعلوم فیض الباری نوادہ میں نہایت تزک و احتشام کے ساتھ منایا گیا

جس کی سرپرستی شہزادہ باقر العلوم ہیر طریقت حضرت علامہ غلام مصطفیٰ خان حبیبی بنارس نے فرمائی جب کہ صدارت شہزادہ باقر ملت حضرت مولانا غلام مرتضیٰ خاں قادری نے کی نظامت کے فرائض ہندوستان کے مشہور نقیب قاری دانش رضا دلبر نے بحسن وخوبی انجام دیا بعد نمازِ فجر قرآن خوانی کی مجلسِ ہوئی 8:40 منٹ پہ قل شریف کا اہتمام کیا گیا اس کےبعد مجلسِ پاک کا انعقاد ہوا جس میں شہر نوادہ ومضافات کے مشاہیر علمائے کرام و شعرائے اسلام نے حضور وقارملت کی حیات و خدمات پہ روشنی ڈالی اور اپنے محسن و کرم فرما کی بارگاہ میں عقیدت و محبت کا خراج تحسین پیش کیا جن میں خاص طور پہ علامہ غلام مصطفیٰ خان حبیبی صاحب نے عرس کے موضوع پہ سیر حاصل گفتگو فرمائی ، حضرت علامہ مفتی شہاب الدین حبیبی صاحب نے حضور وقارملت اور ان کی علمی و ادبی خدمات پہ بصیرت افروز خطاب فرمایا،مولانا غلام مرتضیٰ خاں قادری نے حضور وقارملت کی تدریسی و تبلیغی خدمات پہ روشنی ڈالی اور ان کے مشن کو آگے بڑھانے پہ زور دیا،

مولانامحمدجہانگیرعالم مہجورالقادری صدر تنظیم علمائے حق ضلع نوادہ نے حضور وقارملت علیہ الرحمۃ والرضوان نے دینی وتبلیغی سفرکے دوران جو صعوبتیں اٹھائی اس پہ بالتفصیل روشنی ڈالی ،درمیان میں شعرائے اسلام نے نعت ومناقب کے روح پرور اشعار سے سامعین کو محفوظ کیا اور خوب داد وتحسین وصول کئے قریب 12:45 میں عرس پاک کی مجلسِ کا اختتام صلوٰۃ و سلام اور دعاء پہ ہوئی بعدہ مزار پرانوار بر حضور وقارملت چادر پوشی،گل ہوشی اور گلاب پاشی کی گئی اس کے بعد رابعہ جامع مسجد میں ظہر کی نماز با جماعت ادا کرنے کے بعد لنگر قادری کو زائرین وسامعین نے تناول کیا اور حضور وقارملت علیہ الرحمہ کے روحانی فیوض وبرکات سے مستفید و مستفیض ہوئے

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

Leave a Reply

Back to top button
Close
Close