بہار و سیمانچل

سمری بختیارپور : ظالموں کا ظلم کالے قانون کے خلاف چل رہی تحریک کو کمزور نہیں کرسکتا : منوج جھا

رانی باغ دھرنا کے 38ویں دن مظاہرین کی جم غفیر سے شرکاہ کا خطاب !

سمری بختیارپور ۔ :26؍فروری 2020 (جعفر امام قاسمی) کالے قانون کے خلاف پورے ملک میں جوتحریک چل رہی ہے وہ تھمنے کانام نہیں لے رہی ہے۔ملک کی سالمیت اوراس کے دستور کی حفاظت کے لیے اس تحریک کےعلم برداراپنی جانوں کانذرانہ پیش کرنے سے بھی گریز نہیں کررہے ہیں۔دہلی میں پچھلے تین روزسے مظاہرین کے ساتھ جو غیرانسانی سلوک کیاگیا،وہ ہندوستان کے ماتھے پرایک کلنک چھوڑگیا۔دیکھتے دیکھتے بیسوں غیرمعصوم سنگھی بھیڑیوں کے ڈنڈے اورگولیوں کے شکارہوگئے،ہزاروں مائیں اوربہنوں کی عزت کے ساتھ کھلواڑکیا۔آج سمری بختیارپورکے رانی باغ دھرنامیں مظاہرین کی حوصلہ افزائی کے لیے راجد کے ترجمان وراجیہ سبھاممبرمنوج کمارجھانے شرکت کی اورانہوں نے دھرنامیں موجود سبھی لوگوں کے ساتھ ایک منٹ کامون رکھ کردہلی میں شہیدہوئے معصومین کوخراج عقیدت پیش کیا۔انہوں نے دھرنامیں موجودمظاہرین کی جم غفیرکوخطاب کرتے ہوئے کہاکہ جولوگ سی اے اے کے بارے میں کہتے تھے کہ ایک انچ پیچھے نہیں ہٹیں گے وہ آج ہماری اورآپ کی وجہ سے نہیں بلکہ ہماری ان مائیں اوربہنوں کے فولادی جذبے سے ڈرکرکوسوں پیچھے ہٹ چکے ہیں۔اورخوف زدہ لہجے میں کہ رہے ہیں کہ این پی آرکے لیے کوئی دستاویزنہیں مانگاجائے گااوراین آرسی کا ابھی کوئی ارادہ نہیں ہے۔انہوں نے کہاکہ جولوگ اپنی زہریلی بولیوں سے دہلی کے ہنستے کھیلتے پریوارکوکومنٹوں میں اجاڑدیے اوردیکھتے دیکھتے بیسوں معصوم افرادکولقمہ اجل بناگئے ایسے لوگوں کوہماراچیلینج ہے کہ تم لوگ جتنی طاقتیں لگالو ہمارے ہندواورمسلم بھائیوں کے درمیان جومحبت اوربھائی چارگی صدیوں سے چلی آرہی ہے اسے تم کسی قیمت پرختم نہیں کرسکتے۔انہوں نے کہاکہ ہندوستان کودوبارہ تقسیم کرنے کی سازش کوہم کامیاب نہیں ہونے دیں گے چاہے اس کے لیے ہمیں اپنی جانوں کانذرانہ کیوں نہ پیش کرناپڑے۔راجد کے سہرسہ ضلع صدرپروفیسرطاہرنے کہاکہ ملک میں جوصورت حال پیداکی جارہی ہے اسے ہم سب سمجھیں اوریہ عزم وارادہ کریں کہ ملک دشمن عناصرچاہے جتنی طاقت لگالیں ہماری ہندومسلم ایکتاکوکبھی ختم نہیں کرسکتے۔انہوں نے اسٹیج پرموجود برادران وطن کوخطاب کرتے ہوئے کہاکہ ملک کی پرامن فضاجومکدرہورہی ہے اسے صاف اورآئینہ داربنانے کے لیے آپ کی طاقت اورآپ کی آوازکی ضرورت ہے۔وہیں راجد کے یوواقومی جنرل سکریٹری نے اجے کمارنےکہاکہ آپ لوگوں نے سی اے اے این پی آراورایم آرسی کی مخالفت میں جوتحریک چھیڑی اس میں اتنی کامیابی ملی کہ حکومت بہارنے این پی آراوراین آرسی کوبہارمیں نافذنہ کرنے کی بات اسمبلی میں پاس کردی۔اسی طرح اگرآپ نے یہ تحریک جاری رکھی تومرکزی حکومت بھی پارلیمنٹ میں لکھ کردے گی کہ ہم سے نادانی ہوئی اب ہم ان قوانین کے نفاذ سے دست بردارہوتے ہیں۔ان کے علاوہ دھرناکوایم یوطلبہ یونین لیڈرابوالفرح شاذلی،راجد کے بلاک صدرسیدھلال اشرف اورصحافی شہنوازبدرقاسمی نے بھی خطاب کیا۔آج کے دھرناکی صدرات چھتری یادونے کی جب کہ نظامت کے فرائض پن پن یادونے انجام دیا۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

متعلقہ خبریں

Back to top button
Close
Close