بہار و سیمانچل

عوام کسی بھی حالت میں آر ایس ایس ایجنڈہ کو ملک میں لاگو ہونے نہیں دیں گے: اخترالایمان

سنویدھان بچاؤ سنگھرش مورچہ کے بینر تلے 15ویں دن بھی دربھنگہ کا ستیہ گرہ جاری

دربھنگہ۔یکم؍فروری: (رفیع ساگر) پریس ریلیز۔آج لال باغ ستیہ گرہ عبدالحمیدچوک پر AIMIM پارٹی کے بہارریاستی صدر اخترالایمان، یوا صدر عادل حسن آزاد پہنچے اور لڑائی کو مضبوطی دینے کا کام کیا۔ اخترالایمان نے کہا کہ بھاجپا چاہتی ہے کہ آر ایس ایس کے ایجنڈہ کو ملک میں لاگو کریں جو ناممکن ہے۔ ملک کی عوام جاگ چکی ہے اس لئے کسی بھی حالت میں آرایس ایس کے ایجنڈہ کو ملک کی عوام ملک میں لاگو ہونے نہیں دے گی۔وہیں AIMIM پارٹی کے بہار یوا صدر عادل حسن آزاد نے بھی بھاجپا پر جم کر نشانہ سادھتے ہوئے کہا کہ ملک کی عوام بھاجپا کی سازش کو سمجھ چکے ہیں اس لئے ان کے کسی بھی جھانسے میں نہیں آنے والے ہیں۔ یہ لوگ پولیس اور بجرنگ دل، آرایس ایس کے غنڈوں کا سہارا لیکر آندولن کاریوں پر حملہ کروارہے ہیں۔ یہ لوگ ڈر چکے ہیں یہی وجہ ہے کہ انہیں کرسی جانے کا غم ستارہا ہے۔ ملک کی عوام آرایس ایس کے کسی بھی ناپاک منشا کو کامیاب نہیں ہونے دے گی۔ وہیں انصاری مہاپنچایت کے کنوینر وسیم نیرانصاری نے لال باغ ستیہ گرہ پر لگاتار خواتین اور مردو نوجوانوں کی بھیڑ اور حمت و حوصلہ کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ یقینا ہم اس لڑائی کو جیتیں گے اور جو لوگ اس لڑائی میں ساتھ نہیں آرہے ہیں ان سے اپیل کرتے ہوئے کہا کہ یہ لڑائی سبھوں کی ہے اتحاد کے ساتھ اس لڑائی کو انجام تک لڑنے کی ضرورت ہے۔ سبھی لوگوں کو اپنے اپنے گھروں سے نکلنا ہوگا۔ انہوں نے کہا کہ کچھ لوگ غلط فہمی میں ہیں کہ یہ لڑائی صرف جو لوگ ستیہ گرہ پر بیٹھے ہیں ان کی ہے ایسا ہرگز نہیں ہے یہ کالاقانون سبھوں کے لئے نقصاندہ ہے اس بات کو سمجھنے کی ضرورت ہے۔ اپنے اپنے گھروں سے لوگوں کو نکلنے کی اپیل کرتے ہوئے کہا کہ دربھنگہ کے لال باغ ستیہ گرہ کی آواز کا نتیجہ ہے کہ آج پورے بہار کے کونے کونے، گلی محلے میں لوگ اس کالے قانون کے خلاف ستیہ گرہ پر بیٹھ گئے ہیں۔ یہی وجہ ہے کہ حکومت بہار اور مرکز کی حکومیت کی نیند اُڑ چکی ہے۔ وہیں آل انڈیا مسلم بیداری کارواں کے قومی صدرنظرعالم نے کہا کہ امیت شاہ اور مودی کا ڈر اس بات کا ثبوت ہے کہ جھارکھنڈ انتخاب کے بعد دہلی انتخاب بھی ہاررہے ہیں۔ انہوں نے مزید کہا کہ ایک وزیرداخلہ کی زبان سے یہ کہنا کہ اتنی زور سے ای وی ایم کا بٹن دباؤ کہ شاہین باغ تک کرینٹ پہنچے یہ اُن کا ڈر بتارہا ہے۔ ایک شاہین باغ سے وہ کتنا ڈرگئے ہیں جب کہ پورا ملک شاہین باغ بن چکا ہے۔ انہوں نے بہار کے وزیراعلیٰ نتیش کمار کے فرضی سوشان پر بھی حملہ بولتے ہوئے کہا کہ ہریالی یاترا پر اپنے کاموں کی گنتی گنوانے والے مکھیا خود بھی جھوٹ بول رہے ہیں اور ان کے افسران بھی بڑے پیمانے پر جھوٹ کی دکان چلارہے ہیں۔ پہلے NPR اور کل سے NRC کی کارروائی شروع کرنے والے نتیش کمار خودکے فریب میں پھنس گئے ہیں۔ ان کے موکامہ کے بلاک افسر نے کل ایک خط جاری کیا جس میں NRC کا ذکر کیا گیا تھا جب معاملہ طول پکڑا تو بی ڈی او نے کہا کہ بجلی نہیں تھی اندھیرے میں دستخط کردئیے تو نتیش کمار بتائیں کہ وہ جھوٹ بول رہے ہیں یا بی ڈی او جھوٹ بول رہا ہے۔ ایک طرف نتیش جی کہتے ہیں کہ پورے بہار میں بجلی پہنچادیا ہے ان کا افسر کہتا ہے کہ بجلی نہیں تھی غلطی سے ہوگیا۔ مسٹرعالم نے نتیش کمار سے مطالبہ کرتے ہوئے کہ 23 فروری کے دربھنگہ دورے سے پہلے آپ اس کالے قانون کے خلاف اپنا ایجنڈہ صاف کرلیں نہیں تو دربھنگہ کی عوام آپ کو کالا جھنڈا ہی نہیں دکھائے گی بلکہ جگہ جگہ آپ کی مخالفت میں جلوس بھی نکالے گی۔آج لال باغ ستیہ گرہ پر منت رحمانی جو ریاستی صدر ہیں اقلیتی سیل کانگریس کمیٹی بہار کے وہ بھی تشریف لائے اور سیاہ قانون کے خلاف لڑائی میں ساتھ دیا اور کہا کہ ملک کی تاناشاہ حکومت کو ذرا بھی شرم نام کی چیز نہیں ہے عوام سڑکوں پر ہے اور عوام پر گولیاں چلوائی جارہی ہے۔ ستیہ گرہ کی نظامت بیداری کارواں کے سکریٹری انجینئرفخرالدین قمر لگاتار کررہے ہیں۔ستیہ گرہ کے مقام پرشکیل احمدسلفی، نازیہ حسن، صباپروین، مطیع الرحمن، ہیرا نظامی، بدرالہدیٰ خان، ڈاکٹربدرالحسن عرف منن، رام چندر یادو،تنویرعالم عرف نوشاد، سونو خان، محمدمنا، محمدتمنے، قارضی ارشد رحمانی، سلام الدین، پروفیسر محمدعلی، مینک کمار یادو، محمدطالب، محمدفتح،شاداب عالم، محمدارمان،اشرف سبحانی،انو خان، نیازاحمد، شاہداطہر، راجاخان، اسمٰعیل اختر، ذیشان احمد، شاہنواز، محمدعاقل، محمدبشر، محمدبدیع الزماں، امان اللہ امن، توصیف عالم عرف راجہ سمیت سیکڑوں میں تعداد میں لوگ لگاتار اس لڑائی کو مضبوطی کے ساتھ لڑرہے ہیں۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

جواب دیجئے

Back to top button
Close
Close