بہار و سیمانچل

جہاں آباد تشدد معاملہ میں قصورواروں کو سزا دی جائے : جمعیۃ علماء بہار

جہاں آباد تشدد معاملہ میں قصورواروں کو سزا دی جائے : جمعیۃ علماء بہار
پٹنہ ۔ 16 اکتوبر 2019 (پریس ریلیز)
امن وامان کا قیام کسی بھی ملک اور ریاست کی ترقی کے لئے ضروری امر ہے، جو لوگ امن وامان کے راستے میں رکاوٹ بنتے ہیں وہ ملک کے خیرخواہ نہیں ہوسکتے ہیں،جہاں آبادمیں تشددکاجوواقعہ سامنے آیا،وہ یقیناکسی سوچی،سمجھی سازش کے تحت انجام پذیر ہواہے،جو لوگ اس طرح کے واقعات کو انجام دیتے ہیں انہیں سخت سے سخت سزادی جانی چاہئیے،یہ باتیں جمعیۃ علماء بہارکے صدرمحترم جناب مفتی جاویداقبال قاسمی،اور جنرل سکریٹری جمعیۃ علماء بہارجناب مولانامحمدناظم صاحب نے اپنامشترکہ پریس اعلانیہ جاری کرتے ہوئے کہیں،جہاں آبادمیں جس طرح مسلم کمیونیٹی کے لوگوں کو نشانہ بنایاگیا،اوران کی دکانوں کو چن چن کر برباد کیاگیا،یہ یقیناافسوس کامقام ہے،اس سے بھی زیادہ شرم کی بات یہ ہے کہ جن کانقصان ہوا،انہیں ہی گرفتار کیاجارہاہے،اور انہیں ذہنی،جسمانی اذیتیں دی جارہی ہیں،جمعیۃ علماء بہارکے صدرمحترم جناب مفتی جاویداقبال قاسمی نے حکومت بہارسے مطالبہ کیاہے کہ ایسے شرپسندعناصر کے خلاف کارروائی کی جانی چاہئیے جو بہارکے امن کوفسادمیں بدلناچاہتے ہیں،واضح رہے کہ جہاں آباد تشددمعاملہ کے اول دن سے ہی جمعیۃ علماء بہارکے جنرل سکریٹری جناب مولانامحمدناظم صاحب اعلی افسران سے رابطہ میں ہیں،انہوں نے بذریعہ فون رابطہ کرکے جہاں آبادکی صورت حال سے آگاہ کرتے ہوئے کار روائی کرنے کی طرف توجہ بھی دلائی،آج پھر اپنے پریس اعلانیہ کے ذریعہ انہوں نے حکومت بہار کو اس جانب توجہ دلاتے ہوئے کہاہے:کہ جولوگ قصوروارہیں،انہیں یقیناسزادی جانی چاہئیے،لیکن جو بے قصورہیں،ان کی رہائی بھی ہونی چاہئیے۔ایک اندازہ کے مطابق مسلمانوں کاکروڑوں روپئیے کا نقصان ہواہے،نقصانات جو بھی ہوئے ہیں،انہیں معاوضہ بھی دیاجاناچاہئیے۔یہ اطلاع خالدانورپورنوی نے دی۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

Leave a Reply

Back to top button
Close
Close