بہار و سیمانچل

پروفیسر شکیل صمدانی کی وفات عظیم ملی خسارہ: شاہنوازبدرقاسمی

سہرسہ (ہندوستان اردو ٹائمز) علی گڑھ مسلم یونیورسیٹی میں ڈین فیکلٹی آف لاء اور کئی ملی وسماجی تنظیموں سے وابستہ رہے مشہور علمی و ملی شخصیت پروفیسر شکیل صمدانی کی وفات پر سماجی کارکن شاہنواز بدر قاسمی نے اپنی تعزیتی پیغام میں کہاکہ ان کی وفات ملی حلقہ کیلے عظیم خسارہ ہے،وہ ملت کے ان مقبول ترین شخصیات میں تھے جن پر ہمارے اکابرین علماء بھرپور اعتماد کرتے تھے،علی گڑھ یونیورسیٹی میں رہتے ہوئے انہوں نے کبھی بھی ملی سرگرمیوں سے دور نہیں ہوئے، آل انڈیا مسلم پرسنل لاء بورڈ اور مسلم مجلس مشاورت کے معززاراکین میں آپ کاشمار ہوتاتھا،آپ کی رائے کو احترام اور پسندیدگی کے طورپر دیکھاجاتاتھا۔
شاہنواز بدر نے کہاکہ شکیل صمدانی صاحب سے میرے ذاتی تعلقات تھے اور ہمیشہ میری حوصلہ افزائی کے ساتھ رہنمائی فرماتے،ملی مسائل پر گہری نظر رکھتے تھے جب بھی ان سے گفتگو ہوتی اپنی فکر مند ی کااظہار کرنے کے ساتھ کچھ ایسی نئی بات ضرور بتاتے جو میرے لئے عظیم سرمایہ ہے۔انہوں نے کہاکہ مرحوم بے شمار خوبیوں کے مالک تھے آپ ماہر قانون کے ساتھ ایک بہترین مقرر بھی تھے جسے ہرحلقہ میں سراہاجاتا،ان کے اندر اس قدر عاجزی اور انکساری تھی کہ اپنے چھوٹوں کی رہنمائی اورتربیت میں کبھی بخالت سے کام نہیں لیتے نئی نسل کی افرادسازی پر بھی خاص توجہ دیتے تھے۔پروفیسر شکیل صمدانی کی رحلت یقینا علی گڑھ مسلم یونیورسیٹی سمیت ملت اسلامیہ ہند کیلے ناقابل تلافی نقصان ہے جس کی بھرپائی بظاہر ممکن نہیں ہے، اللہ پاک مرحوم کی مغفرت کاملہ اور پسماند گان کوصبر جمیل عطاء فرمائے۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

Leave a Reply

Back to top button
Close
Close