بنگلور

بنگلورو: آئی پی ایس افسر نے اپنی سابقہ بیوی کے گھرکے سامنے دھرنا دیا

بنگلورو،11/فروری(ہندوستان اردو ٹائمز۔ ذرائع)ایک آئی پی ایس افسر نے اپنی سابقہ بیوی کے گھر کے سامنے فٹ پاتھ پر بیٹھ کر دھرنا دیا۔افسر نے بیوی پر الزام لگایا کہ وہ اس کے بچوں سے اسے ملنے نہیں دے رہی ہے۔ارون رنگاراجن جنہیں سپرپنڈنٹ آف پولیس انٹرنل سکیورٹی کلبرگی کے طور پرمقرر کیاگیا ہے اور ان کی بیوی جو فی الحال ایک ڈی سی پی رینک کی افسر ہیں دونوں کی پسندکی شادی کچھ سال پہلے ہوئی تھی۔ متواتر تبادلوں اور غلط فہمیوں کے سبب بعد ازاں وہ طلاق کے لئے فیملی کورٹ سے رجوع ہوئے جس نے 2015میں ان کی طلاق کی عرضی کو منظوری دی۔ اس جوڑے کاایک بیٹا اور بیٹی ہیں۔ارون نے الزام لگایاکہ ”جب میں میرے بچوں کوملنے آتاہوں تو وہ مجھے گھر سے باہر نکالنے کے لئے خواتین ہوم گارڈس کو بھیجتی ہے۔“نامہ نگاروں سے بات کرتے ہوئے رنگا راجن نے کہا”میں جمعہ کو ایک میٹنگ کے لئے بنگلور آیااور اپنے بچوں سے ملنے کے لئے ایک دن کی چھٹی لی۔ وہ وسنت نگر میں رہتی ہے۔ وہ مجھے اپنے بیٹے اور بیٹی سے ملنے نہیں دے رہی ہے۔“اس نے یہ کہتے ہوئے کہ میں اسے ہراساں کر رہا ہوں پولیس کنٹرول روم میں شکایت درج کرائی۔ اس نے میرے خلاف یہ افواہیں بھی پھیلائیں کہ میں بچوں سے ملنے سے کترا رہا ہوں اور انہیں ملنے ہی نہیں آ رہا ہوں۔کرناٹک کو تبادلہ ہونے سے پہلے جوڑا چھتیس گڑھ میں کام کر رہا تھا۔رات تقریباً ڈھائی بجے موقع پر پہنچے ڈی سی پی بھیما شنکر گلید پیرکی صبح کو ان کو ان کے بچوں سے ملانے کی ذمہ داری لی اور رنگا راجن کو اپنے گھر لے جانے میں کامیا ب ہوئے۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

Leave a Reply

Back to top button
Close
Close