بنگلور

بنگلور: قربانی سے متعلق مولانا صغیراحمد رشادی نے مسلمانوں کے لئے جاری کئے رہنما خطوط

بنگلورو،4؍جولائی(ہندوستان اردو ٹائمز) عید الاضحیٰ سے متعلق امیر شریعت مولانا صغیراحمد رشادی نے مسلمانان کرناٹک کو چند رہنما ہدایات جاری کی ہیں۔انہوں نے تاکید کی ہے کہ 9ذی الحجہ کی نماز فجر کے بعد سے 13ذی الجہ کی نماز عصر تک تکبیرات شریف پڑھنا واجب ہے اور تین مرتبہ پڑھنا افضل ہے۔

انہوں نے کہا کہ عید کے دن نماز عید الاضحیٰ وقت پر پڑھ لینا بہتر ہے۔اگر قربانی کی جارہی ہے تو قربانی کے بعد پاکی صفائی کا خاص خیال رکھا جائے۔قربانی کی ویڈیو گرافی یا تصاویر کھینچ کر سوشیل میڈیا کے ذریعہ عام نہ کیا جائے۔انہوں نے کہا کہ قربانی عظیم عبادت ہے اور شعائر اسلام میں سے ہے۔ قربانی کے تینوں دن 11,10اور 12 ذی الحجہ میں صاحب نصاب پر قربانی واجب ہے۔ان دنوں میں قربانی کے جانور کا خون بہانے سے افضل کوئی عمل نہیں۔قربانی کے بغیر جانور کی رقم صدقہ کرنا جائز نہیں ہے۔یہ قربانی کا بدل نہیں ہوسکتا۔ البتہ کوشش کے باوجود قربانی نہ کی جاسکے تو قربانی کے تین دنوں بعد جانور کی رقم یا جانور بطور صدقہ دے دیں۔

ریاستی حکومت کی طرف سے جن جانوروں کا ذبیحہ ممنوع ہے مثلاً گائے اور اونٹ، ان کے ذبیحہ سے پرہیز کریں۔تمام احتیاطی تدابیر اور پاکی صفائی کو ملحوظ رکھتے ہوئے خون، غلاظت یا ناقابل استعمال اشیاء کو بلدیہ کی جانب سے ٹھکانے لگانے کے لئے مقرر کئے گئے مقامات پر پہنچائیں۔گلی کوچوں میں کھلے عام قربانی نہ کریں۔ قربانی کے جانوروں کی نمائش کرنے یا گلیوں میں انہیں لے کر گشت کرنے سے گریز کریں۔

ہماری یوٹیوب ویڈیوز

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button