بنگال

بی جے پی کے پانچ برس کامطلب 500برس،نوٹ بندی میں 50 دن مانگے تھے : مودی کی ’ترقی‘ نے کسانوں اوربے روزگاروں کوپریشان کردیا،ٹی ایم سی نے مودی کوچیلنج کیا

کولکاتا / نئی دہلی20مارچ(آئی این ایس انڈیا)بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) اور ترنمول کانگریس (ٹی ایم سی) کے مابین انتخابی جنگ مغربی بنگال اسمبلی انتخابات سے قبل دلچسپ ہوتی جارہی ہے۔ ترنمول کانگریس کے رکن پارلیمنٹ ابھیشیک بنرجی نے آج وزیر اعظم نریندر مودی کے الزامات پرچیلنج کیاہے ۔صرف یہی نہیں ، انہوں نے وزیر اعظم مودی کو بھی بحث کے لیے چیلنج کیا ہے۔ پی ایم مودی نے بنگال میں انتخابی مہم کے دوران ٹی ایم سی پر بدعنوانی کا الزام عائد کیا تھا۔ ترنمول کے انتخابی نعرے’کھیل ہوابا‘ پر ٹی ایم سی رہنما اور سی ایم ممتا بنرجی کے بھتیجے ابھیشیک بینرجی نے کہاہے کہ وزیراعظم مودی کا کہنا ہے کہ دیدی نے کہاہے کہ کھیل ہوابا اور ہم کہتے ہیں وکاس ہوابالیکن بی جے پی کی ترقی کسانوں کو مار رہی ہے۔ وزیر اعظم نے 15 لاکھ روپے دینے کا وعدہ کیا۔ کیا آپ نے رقم وصول کی؟ آج ، وہ پانچ سال سے پوچھ رہے ہیں۔انھوں نے نوٹ بندی کے دوران 50 دن مانگے تھے۔ آپ مجھے کہیں بھی پھانسی دے سکتے ہیں۔ وہ (وزیر اعظم مودی) اپنی بات برقرار نہیں رکھ سکتے۔ اگر وہ پانچ سال مانگتے ہیں تویاد رکھیں کہ اس میں 500 سال لگیں گے۔انہوں نے وزیر اعظم کے ’سوناربنگلہ‘ کے وعدے پر بھی سخت تنقیدکی ہے۔ بی جے پی کے زیراقتدار ریاستوں اور مرکز کا ذکر کرتے ہوئے انہوں نے پوچھا ہے کہ آپ سونار ہندوستان کیوں نہیں بناسکتے؟ سونارتریپورہ کیوں نہیں؟بنرجی نے کہا ہے کہ ممتا بنرجی نے 10 سالہ رپورٹ کارڈ دیا ہے۔ مودی کا رپورٹ کارڈ کہاں ہے؟۔اس کے بعد ٹی ایم سی لیڈر ابھیشیک بنرجی نے وزیر اعظم مودی کوبحث کے لیے چیلنج کیا۔ممتا بنرجی نے کہاہے کہ میں آپ کو ایک مباحثے کے لیے چیلنج کرتا ہوں۔ ہم بحث کریں گے کہ دیدی نے 10 سال میں کیاکیااور مودی نے سات سال میں کیاکیا۔ ہم آپ کو دس نکات سے شکست دیں گے۔ میں 33 سال کا ہوں۔ میں سینئروں کا احترام کرتا ہوں۔ میں آپ کوانتباہ دیتا ہوں بنگالی میں بغیر کاغذ کے دومنٹ بولیں۔ میں 2 گھنٹے ہندی میں بولوں گا۔ آپ بنگالی میں صرف 120 سیکنڈکے لیے بولیں گے۔اس چیلنج کو قبول کریں۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

Leave a Reply

متعلقہ خبریں

Back to top button
Close
Close