بنگال

مغربی بنگال میں انتخابات کے بعد ہوئے تشدد پر مرکز ، ریاستی حکومت اور الیکشن کمیشن کو سپریم کورٹ کا نوٹس

بنگال،یکم جولائی (ہندوستان اردو ٹائمز) مغربی بنگال میں انتخابات کے بعد ہوئے والے تشدد کی ایس آئی ٹی کے مطالبے والی درخواست پر سپریم کورٹ نے مرکزی حکومت ، مغربی بنگال حکومت اور الیکشن کمیشن کو نوٹس جاری کر جواب طلب کیا ہے۔ دراصل ، رنجنا اگنیہوتری اور ایک دیگرنے سپریم کورٹ درخواست دائر کرمغربی بنگال میں اسمبلی انتخابات کے بعد 2 مئی سے شروع ہونے والے سیاسی تشدد کی عدالتی نگرانی میں ایس آئی ٹی سے تحقیقات کرانے کا مطالبہ کیاہے۔ درخواست میں تمام متاثرین کو معاوضہ دینے کا حکم جاری کرنے کا بھی مطالبہ کیا گیا ہے۔ درخواست میں کہا گیا ہے کہ مرکزی اور ریاستی حکومت کو ان لوگوں کی بحالی کا حکم دیا جائے جو اپنا گھر چھوڑ کر اور آسام یا دیگر ریاستوں میں بے گھر ہوچکے ہیں۔

درخواست میں مرکزی حکومت سے ریاست میں صدر راج نافذ کرنے جیسے اقدامات کرنے کی ہدایت بھی کی گئی ہے۔ اس کے علاوہ درخواست میں مطالبہ کیا گیا ہے کہ مرکزی حکومت کو ریاست میں نیم فوجی دستوں کی تعیناتی کا حکم دیا جائے۔کچھ دن پہلے سپریم کورٹ کے جج جسٹس اندرا بنرجی نے بنگال میں پولنگ کے بعد ہونے والے تشدد کے کیس کی سماعت سے خود کو الگ کرلیا تھا۔ جسٹس اندرا بنرجی اس معاملے سے برطرف ہوتے ہوئے کہا کہ میں اس معاملے پر سماعت نہیں کرنا چاہتی۔ جسٹس بنرجی کا تعلق کولکاتہ سے ہے۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

Leave a Reply

Back to top button
Close
Close