تعلیمدہلی

بجٹ میں تخفیف: یونیورسٹی حکام وزارت تعلیم سے رابطے میں، اے ایم یو کا بیان

نئی دہلی ، 21جولائی (ہندوستان اردو ٹائمز) علی گڑھ مسلم یونیورسٹی (اے ایم یو) اور جامعہ ملیہ اسلامیہ کے تعلیمی بجٹ میں تخفیف کی خبریں پچھلے کئی دنوں سے اخبارات اور سوشل میڈیا پر گشت کررہی تھیں۔ دراصل وزارت تعلیم نے گزشتہ مالی سال 2022-22 میں جامعہ ملیہ اسلامیہ اور علی گڑھ مسلم یونیورسٹی کے فنڈز میں تقریباً 15 فیصد کی کمی کی تھی۔ اس خبر نے ہلچل پیدا کردی تھی کہ آخر ماجرا کیا ہے۔ اب اے ایم یو نے اس معاملے میں وضاحت کی ہے کہ کورونا دور میں سب یونیورسٹیوں کے بجٹ کم کئے گئے تھے کیونکہ تعلیم آف لائن ہورہی تھی۔مگر ساتھ ہی یونیورسٹی نے اس بات کا ذکر کیا ہے کہ اب یونیورسٹی اس سلسلے میں وزارت تعلیم سے رابطے میں ہے۔لیکن اب سب سے پہلے اے ایم یو نے یک وضاحت جاری ہے۔

بجٹ مختص کئے جانے کے معاملہ میں یونیورسٹی ترجمان نے واضح کیا ہے کہ یونیورسٹی کے اعلیٰ اہلکاروں نے متعلقہ حکام سے رابطہ کیا ہے اور یونیورسٹی کافی عرصے سے اس معاملے کی بھرپور طریقے سے پیروی کر رہی ہے اور معاملہ زیر غور ہے۔کووِڈ-19 لاک ڈاؤن کے دوران بیشتر یونیورسٹیوں کے بجٹ میں تخفیف کی گئی تھی، کیونکہ تعلیمی ادارے بند تھے اور صرف آن لائن کلاسز ہوئی تھیں۔دراصل وزارت تعلیم نے کانگریس کے رکن پارلیمنٹ ٹی این پرتھاپن کے سوال کے جواب میں بتایا تھا کہ جامعہ ملیہ اسلامیہ اور علی گڑھ مسلم یونیورسٹی کے فنڈز میں پچھلے مالی سال 2022-22 میں پچھلے سال کے مقابلے تقریباً 15 فیصد کی کمی کی گئی تھی۔ جس کے بعد اس معاملہ نے سرخیوں پر قبضہ کرلیا تھا۔

وزارت کی طرف سے فراہم کردہ تفصیلات کے مطابق، جامعہ ملیہ اسلامیہ نے فنڈ مختص کرنے کے سلسلے میں تقریباً 68.73 کروڑ روپے کی کمی ریکارڈ کی ہے۔ یونیورسٹی کا فنڈ 2020-21 میں 479.83 کروڑ روپے سے گھٹ کر 2021-22 میں 411.10 کروڑ روپے کر دیا گیا۔اے ایم یو کے لیے مختص رقم 2020-21 میں 1,520.10 کروڑ روپے سے گھٹ کر 2021-22 میں 1,214.63 کروڑ روپے ہوگئی۔ اس میں تقریباً 306 کروڑ روپے کی کمی واقع ہوئی۔بنارس ہندو یونیورسٹی کے معاملے میں، 2014 اور 2022 کے درمیان فنڈنگ دوگنا ہوگئی۔BHU کے لیے مختص رقم 2014-15 میں 669.51 کروڑ روپے سے بڑھ کر 2021-22 میں 1,303.01 کروڑ روپے ہوگئی۔ اسی طرح راجیو گاندھی یونیورسٹی کی فنڈنگ 2014-15 میں 39.93 کروڑ روپے سے 250 فیصد بڑھ کر 2021-22 میں 102.79 کروڑ روپے ہوگئی۔

ہماری یوٹیوب ویڈیوز

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔

Back to top button