اہم خبریں

کسانوں کا غصہ جائز:اومابھارتی

نئی دہلی یکم دسمبر(آئی این ایس انڈیا) دہلی اورآس پاس کے علاقوں میں کسانوں کی جانب سے گذشتہ کئی دنوں سے مظاہرے جاری ہیں۔سابق مرکزی وزیراوربھارتیہ جنتا پارٹی کی رہنما اوما بھارتی نے بھی کسانوں کے بارے میں کہا ہے کہ ان کا غصہ جائز ہے ، لیکن حکومت ان کی بات ماننے کے لیے تیارہے۔ کسانوں کوچاہیے کہ وہ پر امن طریقے سے حکومت سے بات کریں اور مرکز کو موقع دیں۔اوما بھارتی نے مدھیہ پردیش میں کسان تحریک پر اظہار خیال کیا۔ انہوں نے کہاہے کہ کسانوں کا غصہ جائز ہے کیونکہ کسانوں کو طویل عرصے سے نظرانداز کیا جارہا ہے۔ کسانوں کو جو بھی پریشانی ہو ، مرکزکے لوگوں کے ساتھ بیٹھ کر اپنی بات کورکھیں۔اوما بھارتی نے کہاہے کہ کسانوں کے مطالبات بہت اہم ہیں۔ایسی صورت میں ان کا تدارک کیا جاسکتا ہے۔ لیکن کسانوں کو حکومت کی بات سننی چاہیے ، اس طرح سے کسی کو بھی زحمت نہیں اٹھانا چاہیے۔ اگر صرف چند کسان جاکر مرکز سے بات کریں گے تو اس کا حل ہوگا۔ ہمارے ملک میں ، کسان قرض دینے والا ہونا چاہیے، قرض لینے والانہیں۔کسانوں کاکہناہے کہ مرکزی حکومت ایم ایس پی کو قانون کا حصہ بنائے اور اس سے کم ادائیگی کرنے والوں کو سزا کا انتظام کرے۔ جبکہ حکومت یقین دہانی کر ارہی ہے کہ ایم ایس پی کبھی ختم نہیں ہوگی اور منڈی کا نظام بھی جاری رہے گا۔ لیکن کسان ان معاملات کو قانون کاحصہ بنانے پرضدکررہے ہیں۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

Leave a Reply

Back to top button
Close
Close