اہم خبریں

بے روزگاری اوربربادطبی نظام پر تلخ حقیقت کو چھپانے کی کوشش ، پارلیمانی کمیٹی کی رپورٹ پر راہل گاندھی کا مرکزی حکومت پر تازہ حملہ

نئی دہلی22نومبر(آئی این ایس انڈیا) کورونا سے متعلق پارلیمانی کمیٹی کی رپورٹ پرکانگریس کے سابق صدرراہل گاندھی نے مرکز میں نریندر مودی حکومت کو نشانہ بنایا ہے۔ پارلیمنٹری اسٹینڈنگ کمیٹی برائے ہیلتھ نے کوویڈ۔19 وبائی بیماری کی رپورٹ میں بتایا ہے کہ 1.3 بلین کی آبادی والے ملک میں صحت پراخراجات بہت کم ہیں اورہندوستانی طبی نظام کی کمزوری کی وجہ سے مؤثرطریقے سے وباسے نمٹنے میں بڑی رکاوٹ ہے۔کمیٹی نے یہ بھی کہا ہے کہ کوویڈ۔19 کے بڑھتے ہوئے واقعات کے درمیان سرکاری اسپتالوں میں بستروں کی کمی اور وباکے علاج کے لیے مخصوص ہدایت نامے کی عدم فراہمی کے سبب نجی اسپتالوں نے رقم اکٹھی کی ہے۔ اس کے ساتھ ہی کمیٹی نے اس بات پر زور دیاہے کہ مستقل قیمتوں کے عمل سے بہت ساری ہلاکتوں سے بچاجاسکتا ہے۔اتوارکے روز کانگریس کے لیڈرراہل گاندھی نے اس رپورٹ کی بنیاد مرکزی حکومت پر حملہ کیا ہے۔راہل گاندھی نے اپنے ٹویٹ میں لکھا ہے کہ مودی سرکار کے غیر منصوبہ بند لاک ڈاؤن نے لاکھوں لوگوں کو غربت ،طبی بحران کی طرف ڈھکیل دیا۔ڈیجیٹلائزیشن سے طلباء کے مستقبل کو خطرے میں ڈال دیاگیاہے۔یہ وہ تلخ حقیقت ہے جسے بھارتی حکومت چھپانے کی کوشش کرتی ہے۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

متعلقہ خبریں

Back to top button
Close
Close