اہم خبریں

وزیر اعظم کے خطاب سے منسلک تمام امیدیں دم توڑگئیں: کانگریس کاوزیراعظم پرحملہ

نئی دہلی، 30 جون (آئی این ایس انڈیا) وزیر اعظم نریندر مودی کے قوم سے خطاب کے بعد منگل کو کانگریس نے کہا کہ وزیر اعظم نے تمام امیدوں کو ختم کریا ہے کیوں کہ انہوں نے چین کے ساتھ تعطل اور غریبوں کی مدد کے تناظر میں کچھ نہیں کہا۔ پارٹی ترجمان سپریا شرینیت نے یہ بھی دعوی کیا کہ وزیر اعظم کا خطاب کہیں نہ کہیں بہار اسمبلی انتخابات پر مرکوزنظرآیا۔

انہوں نے ویڈیو لنک کے ذریعے نامہ نگاروں کو بتایاکہ وزیر اعظم کے خطاب سے توقعات کا پہاڑ کھڑکیاگیاتھا لیکن انہوں نے تمام توقعات پرپانی پھردیا، صرف سرخیاں بٹورنے کی کوشش کی۔سپریا نے کہاکہ ہم امید کررہے تھے کہ وہ کورونا بحران سے نمٹنے کے سلسلے میں بڑا قدم اٹھائیں گے، بے روزگار لوگوں کو راحت فراہم کرنے کے لئے اقدامات کریں گے، ہمیں امید ہے کہ وہ مزدورں کے لئے فیصلہ کن اقدامات اٹھائیں گے، ہمیںامیدتھی کہ غریب خاندانوں کو 7500 روپے ماہانہ دینے کا اعلان کریں گے۔

کانگریس ترجمان نے کہاکہ ہمیں سب سے بڑی امید تھی کہ وزیر اعظم ہمارے دشمن چین سے آنکھیں ڈال کر بات کریں گے لیکن انہوں نے کچھ نہیں کیا۔ ایک سوال کے جواب میں انہوں نے کہاکہ ہندوستانی حکومت نے 59 چینی ایپس پر پابندی عائد کی ہے، اس پرمجھے کہنا ہے کہ علامتی لڑائی کرنے کام نہیںچلے گا، ہمیں آنکھ میں آنکھ ڈال کر بات کرنی ہوگی اور چین پر سخت کارروائی کرنی ہوگی۔

انہوں نے کہا کہ کانگریس صدر سونیا گاندھی اور پارٹی نے پہلے ہی مطالبہ کیا تھا کہ ’پردھان منتری کلیان اناج یوجنا‘ کی مدت میں توسیع کی جائے اور حکومت نے فیصلہ کردیا لیکن یہ اعلان توکوئی وزیربھی کرسکتا تھا۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

جواب دیجئے

Back to top button
Close
Close