اہم خبریں

میران ، صفورا کی عدالتی تحویل میں 30 دن کی توسیع

نئی دہلی27مئی(آئی این ایس انڈیا) دہلی کی ایک عدالت نے جامعہ رابطہ کمیٹی (جے سی سی) کے ممبر میران حیدر اور صفورا زرگر کی نظربندی میں 30 دن کی توسیع کی ہے۔سی اے اے مخالف احتجاج میں متحرک ان افرادکوانھیں دہلی تشددکے الزام میں گرفتارکیاگیاہے۔ ایڈیشنل سیشن جج دھرمیندر رانا نے تہاڑ جیل سے ویڈیو کانفرنس کے ذریعے پیش کیے جانے کے بعد انہیں 25 جون تک ریمانڈ پررکھنے کومنظوری دی۔

حیدر جامعہ ملیہ اسلامیہ میں پی ایچ ڈی کے طالب علم ہیں اور زگر ایم فل کی طالبہ ہیں۔حیدر اورزرگر کے علاوہ ، جامعہ کی طالبہ گل فشاں خاتون ، کارکن خالد سیفی ، کانگریس کی سابق کونسلر عشرت جہاں اور معطل آپ کے کونسلر طاہر حسین کو بھی ویڈیو کانفرنس کے ذریعے عدالت میں پیش کیاگیا۔ پولیس نے حیدرر ، زرگر اور حسین کو عدالتی تحویل میں 30 دن اور جہاں اورسیفی کی تحویل میں 14 جون تک توسیع کی درخواست کی۔

عدالت نے پولیس کی حیدر اور زرگر کے لیے درخواست کو قبول کرلیا لیکن کہاہے کہ اس درخواست پر عدالتی تحویل کی مدت ختم ہونے کے بعد غور کیا جائے گا۔ اب اس کیس کی سماعت 28 مئی کو ہوگی۔سیفی اور عشرت 30 مئی تک عدالتی تحویل میں ہیں اور حسین کی عدالتی تحویل 29 مئی کو ختم ہوگی۔

پولیس نے اپنی درخواست میں کہاہے کہ آئی پی سی کی دیگر شقوں ، یو اے پی اے کے تحت چارج شیٹ داخل کرنے کے معاملے میں ملزم کے خلاف مضبوط ثبوت موجودہیں۔

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

جواب دیجئے

Back to top button
Close
Close