دیوبند

اللہ کا نام لینے والے ہی قیامت تک باقی رہیں گے

مدرسہ مدینۃ العلوم کے سالانہ اجلاس سے مولانا سید ازہر مدنی کا اظہار خیال

دیوبند، 16؍ مارچ (رضوان سلمانی) قصبہ گنگوہ کے مضافاتی گاؤں لکھنوتی میں قائم مدرسہ مدینۃ العلوم کے زیرانتظام ایک جلسہ منعقد ہوا جس کی صدارت جمعیۃ علماء اترپردیش کے سکریٹری مولاناسیدازہرمدنی نے کی جبکہ نظامت کے فرائض مولوی محمداویس لکھنوتی اور مفتی جنیداحمدقاسمی نے مشترکہ طورپر انجام دی۔ اس موقعہ پر حفظ مکمل کرنے والے چارطلبہ کی دستاربندی بھی علماکے ہاتھوں انجام میں آئی۔

اس موقع پر اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے مولاناسیدازہرمدنی نے ذکرالٰہی کے فضائل وفوائد پر روشنی ڈالی اور اسے مومن کے لئے روحانی غذا سے تعبیر کیا۔ مولانامدنی نے کہاکہ اللہ کا نام لیتے رہنا خوش بختوں کا وظیفہ ہے جس سے اس کے قلب وقالب پر حرارت ایمانی کی تپش پڑتی ہے۔موصوف نے مزید کہا کہ اللہ کا نام جب تک اس دنیا میں گونجتا رہے گا تو یہ زمین وآسمان کا نظام بھی باقی رہے گا لیکن حیرت کا مقام ہے کہ یہی اللہ کا نام لینے والے ہمیشہ مشق ستم بنتے رہے ہیں۔

جامعہ اشرف العلوم رشیدی گنگوہ کے استاذ تفسیر مولانامحمدصابرقاسمی نے سماج ومعاشرہ کی اصلاح پر زوردیتے ہوئے کہا کہ اس کے بغیر ہم اللہ کی رحمتوں کے قریب نہیں آسکتے۔ مولانا نے مزید کہا کہ سماج میں بگاڑ اور منکرات کے بڑھنے سے انارکی پھیلتی ہے اور برکتوں کا دروازہ بند ہوجاتا ہے اس لئے بھلائیوں کی تلقین اور برائیوں سے بچنے کی دعوت صالح معاشرت کا لازمی عنصر ہے جس سے اہل علم افراد کو غافل نہیں رہنا چاہئے۔جمعیۃ علما بلاک گنگوہ کے صدر اور جماعتی نظام شوری کے رکن مفتی غیاث الدین قاسمی نے مدارس کی افادیت پر روشنی ڈالی اور دینی مدرسوں کو اسلام کے پاور ہاؤس سے تعبیر کیا انہوں نے کہا کہ سماج کی اصلاح وتربیت میں مدارس کے کردار کو فراموش نہیں کیا جاسکتا۔

اجلاس کو مولانامحمدصادق مظفرنگری اور مولانامحمودسلمان گنگوہی نے بھی خطاب کیا۔صدر اجلاس مولاناسید ازہرمدنی کی دعا پر پروگرام ختم ہوا، جبکہ ناظم مدرسہ مفتی غیاث الدین قاسمی نے تمام مندوبین کا شکریہ ادا کیا۔ اس موقعہ پرقاری عبدالرحمان ناظم دارالعلوم حسینیہ گنگوہ ، قاری محمدمستعد ،ماسٹر محمدراشد صدرجمعیۃ علماتحصیل نکوڑ، مولوی محمدانس مفتی محمداسامہ رشیدی ،مولوی محمدطاہررشیدی اور شاعر نوجوان جگر دھانوی سمیت قرب وجوار کے لوگوں نے شرکت کی۔

ہماری یوٹیوب ویڈیوز

جواب دیں

آپ کا ای میل ایڈریس شائع نہیں کیا جائے گا۔ ضروری خانوں کو * سے نشان زد کیا گیا ہے

Back to top button