اشعار و غزل

تمناۓ دل شاعری۔۔! یہ طریقہ ۔۔۔بھی آزماتا چل زخم کھاکر۔۔۔ مسکراتا چل! ماسٹرمحمد اشفاق

تمناۓ دل شاعری۔۔۔۔
ماسٹرمحمد اشفاق مدرس مدرسہ محمدیہ بڑگاؤں

یہ طریقہ ۔۔۔۔۔۔۔۔بھی آزماتا چل
زخم کھاکر۔۔۔۔۔۔۔۔۔ مسکراتا چل

یہ نیکیاں بھی جنت دلائے گی
راہوں سے۔۔۔۔۔۔۔۔ پتھر ہٹاتا چل

گر تمنا ہے ۔۔۔۔۔۔تجھے جینے کی
تو نفرتوں کو دل سے مٹاتا چل

رحمتیں خود ہی ساتھ آئینگی
ماں باپ کو بس ہنساتا چل

دوست تو دوست ہی ہے مگر
دشمنوں کو بھی مناتا چل

متعین کر لیا ہے جب ایک کو
اسی سے پھر نظریں ملاتا چل

چاہتا ہے گر پاکیزگی کی زندگی
تو ہر برے سے خود کو بچاتا چل

یوں۔ تکبر سے کچھ نہیں ہوگا
عاجزی کو۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ ہی آزماتا چل

تجھکو کمزور نہ سمجھ لے کہیں
ظالموں کو زور اپنا دکھاتا چل

کیا ملے گا تجھے دنیا سے اشفاق
اپنے دل میں رب کو بساتا چل

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

جواب دیجئے

Back to top button
Close
Close