اشعار و غزل

غزل۔: جب گھٹا کوئی برستی ہوئی کالی جائے : مجھ سے حالت مری دیکھی نہ سنبھالی جائے : ڈاکٹرعنبرعابد بھوپال

غزل۔

جب گھٹا کوئی برستی ہوئی کالی جائے
مجھ سے حالت مری دیکھی نہ سنبھالی جائے

تجھ سے ملنے کی گھڑ ی کا ہے اثر یوں دل پر
قیمتی چیز کوئی جیسے چرا لی جائے

خشک سی ریت کو انگلی سے کریدا اس نے
کیا ضروری ہے نمی ایسے نکالی جائے

اتنی برکت تو مرے رزق میں تو دے مولٰی
در سے خالی نہ کوئی میرے سوالی جائے

اس طرح دل سے تری یاد نکالی ہم نے
زخم سے جیسے کوئی پھانس نکالی جائے

ہم بھنور میں ہیں کبھی، اور بھنور ہم میں کبھی
کس طرح زیست کی کشتی یہ سنبھالی جائے

شکوہ ءحال ہے ہم کو نہ زمانے سے گلہ
ہاں مگر بات نہ اب تیری نکالی جائے

ڈاکٹرعنبرعابد بھوپال

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

Leave a Reply

متعلقہ خبریں

Back to top button
Close
Close