شہدائے اسلام کا اجلاس بھی اہل بیت سے محبت کی کھلی دلیل ہے.مولانامفتی کفیل اشرف

شہدائے اسلام کا اجلاس بھی اہل بیت سے محبت کی کھلی دلیل ہے.مولانامفتی کفیل اشرف

صاحب.بنارس9ستمبر(توصیف عالم نمائندہ ہندوستان اردوٹائمز)٨محرم الحرام بروزاتواربعدنمازعشاءپکی مسجدللہ پورہ بنارس.میں شہدائے اسلام کےعنوان پرعظیم الشان کانفرس منعقدہوی جس کی صدارت جناب حضرت مولانا مفتی عبدالباطن نعمانی صاحب مفتی شہربنارس نے فرمائ.خطبہ صدارت میں حضرت مفتی صاحب نے شہدائے اسلام کی تاریخ پرمفصل روشنی ڈالتے ہوےعوام کو بتلایاکہ اسلام کی تاریخ شہداء کے خون سے رنگین ہے.واقعہ کربلاکاپیغام سناتے ہوے.موصوف نے کہاکہ حضرت حسین رض نے اپنی جانِ جان آفریں کے سپردکرتے ہوے.جام شہادت نوش فرمایا.اوریہ پیغام دے گئے کہ حق وناحق کا جب مقابلہ ہوجائے تو حق کو قبول کرتے ہوے جام شہادت نوش کرنا پڑے توکرلے.لیکن ناحق کے سامنے سرنگوں نہ ہو.مولانامفتی کفیل اشرف صاحب لکھنؤی نے فرمایاکہ  شہدائے اسلام کا اجلاس بھی اہل بیت سے محبت کی کھلی دلیل ہے.دوررسول سے دورحسین تک میدان بدرسے میدان کربلاتک تقریباً27000صحابہ کرام رض شہیدہوے.شہادت کا سلسلہ آٹھ ہزارسال سیدنا آدم علیہ السلام کے چھوٹے صاحبزادے سیدنا ہابیل رض کی شہادت سے ہوا.رسولوں اورنبیوں میں سیدنازکریا علیہ السلام اوران کے صاحبزادے سیدنا یحیٰ علیہ السلام کو اللہ تعالیٰ نے مقام شہادت سے سرفرازفرمایا.سرکارمدینہ ص کے زمانہ اقدس میں 256صحابہ کرام شہید ہوے.نعت پاک حافظ انصار صاحب نے پیش کیا نظامت مفتی شمیم الحسینی قاسمی صاحب صدرجمعتہ علماءشہربنارس نے کی بڑی تعدادمیں لوگ شریک اجلاس ہوے مدرسہ انصاریہ کے اراکین نے مہمانوں کی ضیافت فرمائ اوردیررات تک اجلاس ہوا.اورمولانا کفیل اشرف صاحب کی دعاء پر جلسہ کا اختتام ہوا.

اپنا تبصرہ بھیجیں