مضامین و مقالات

کولکتہ میں بزنس کونسل اے بی سی کا قیام اور بہار کے ہر اضلاع میں شاخ کھولنے کا عزم ۔۔۔۔اِنصاف انڈیا

کولکتہ میں بزنس کونسل اے بی سی کا قیام اور بہار کے ہر اضلاع میں شاخ کھولنے کا عزم ۔۔۔۔اِنصاف انڈیا
راقم الحروف۔۔محمد سُلطان اختر
ذرائع پر یقین کیا جائے تو  نئے سال میں  کولکتہ کی ایشین  فیلڈز میں مقیم بزنس کونسل (اے بی سی) ریاست بہار میں اپنی شاخ کھولنے کی تیاری میں ہے
 جب ملک میں معاشی سست روی  ہوتی جا رہی ہے تو بہت سی کمپنیوں میں بند ہونے کے امکانات واضح طور پر نظر آتے ہیں۔  بزنس کونسل (اے بی سی) نوجوانوں کو کاروباری بنانے کے لئے کوشاں ہے۔  اے بی سی کی اسٹراٹیجک ہیڈ محترمہ ایشانی سین گپتا کے مطابق ، اسٹارٹ اپ کمپنیوں کو بہتر کارکردگی کا مظاہرہ کرنے کے لئے مشاورت ، تربیت اور حکمت عملی کی ابتدائی ضرورت کو نظر انداز کردیا گیا ہے ، جس کی وجہ سے اسٹارٹ اپ کمپنیوں کو شروع سے ہی بھاری نقصان اٹھانا پڑتا ہے۔    اے بی سی ہر طرح کی خدمات مہیا کرتی ہے جس میں مشاورت ، تربیت کے ساتھ ساتھ بزنس اسٹریٹجک پلان ، بزنس ری انجینئرنگ شروعاتی کمپنیوں کو فراہم کرنا  ، اے بی سی مسلسل نئے کاروباری افراد کو حوصلہ افزائی کے لئے پروگرام فراہم کرتی ہے ، جس میں خصوصی  زرعی کاروبار سے لے کر کاروبار میں تبدیلی یا صنعتی سیٹ اپ سے لے کر پراجیکٹ مینجمنٹ تک مشاورت  مکمل طور بلا معاوضہ دیا جا رہا ہے.
 اسی ترتیب میں ، ایشین فیلڈز بزنس کونسل (اے بی سی) کے ذریعہ 30 اکتوبر 2019 کو زرعی کاروبار سے متعلق ایک ورکشاپ کا انعقاد کیا گیا۔  ورکشاپ کا مقصد اِنصاف انڈیا کے ذریعہ ملے گا  انصاف انڈیا سیکرٹریٹ ، نگھا آسنسول میں کیا تھا۔  ورکشاپ کا مقصد زراعت کے شعبے میں کاشتکاروں کی مدد کرنا ، زراعت کے شعبے میں کاروباری صلاحیت پیدا کرنا ، پولٹری فارمنیگ ، ڈیری فارمنگ ، ماہی گیری اور زراعت کے شعبے میں نام یاتی کاشتکاری سے متعلق  کسانوں اور نئے تاجروں کے درمیان زراعت اور دیگر شعبوں میں نئے مواقع کو اجاگر کرنا ہے۔   کسانوں اور کاروباری افراد کی ایک بڑی تعداد نے اس ورکشاپ میں شرکت کی ، ایشین فیلڈز بزنس کونسل (اے بی سی) نے نئی صنعتیں شروع کیں۔  ايو کو کاروبار مشاورت، بڑے کاروباری کی تربیت، اقتصادی تعاون کے لئے سرمایہ کاروں کے متعلق، بزنس ٹو بزنس، بزنس ٹو كسٹمر کرنے میں تعاون کرتی ہے.  یہ ایک کاروباری تنظیم ہے جو چھوٹے کاشتکاروں سے صنعتی ترقی میں بڑا کردار ادا کرتی ہے۔
 کلیدی تقریر میں کولکتہ سے محترمہ ایشانی سین گپتا ، شیخ علی ، راجیش مالاکر ، رانچی کے کاروباری اور امریکہ اور کینیڈا میں ای کامرس کے ذریعہ نئے کاروباری امروز حسن ، اِنصاف انڈیا کے قومی جنرل سکریٹری وسیم اکرم خان تھے۔  اے بی سی کے ڈائریکٹر مستقیم صدیقی نے پروگرام کی شروعات کی نوجوانوں میں کاروباری شخصیت پیدا کرنے کا مطالبہ کیا۔  انہوں نے خاص طور پر اپنے بیان میں نئے چیلنج، مواقع اور صلاحیتوں پر توجہ دلائی پروگرام کو کامیاب بنانے میں محبوب خان ، آفتاب خان ، روہن منڈل ، وشوجیت مشرا ، وکرم سنگھ اور  نواب خان نے مرکزی کردار ادا کیا۔
مزید پڑھیں

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

جواب دیجئے

Close