مدھوبنی

شاہین باغ،دیوبند،سبزی باغ کی طرزپر یکہتہ کی خواتین کا امڈاسیلاب

مدھوبنی/21جنوری بروز منگل (منت اللہ رحمانی) شہرت ترمیمی ایکٹ (سی اے اے)اور قومی شہرت رجسٹر (این آرپی)کی مخالفت میں دہلی میں چل رہے خواتین کے مظاہرہ کے بعد منگل کو مدرسہ رحمانیہ یکہتہ میں ہزاروں کی تعداد میں عورتوں نے مظاہرہ کیا.منگل کی صبح ہزاروں کی تعداد میں برقع پوش عورتیں اپنے سروں پر نو سی اے اے ،نو این آرسی ،ونو این پی آر،کی پٹی باندھ کر ہندومسلم سکھ عیسائ آپس میں سب بھائ بھائ،وریجکٹ سی اے اے ،این آرسی،انقلاب زندہ باد جیسے نعرے لکھے کاغذ اٹھاکر پر امن مظاہرہ کرنے لگیں.اس موقع پر نرگس فاطمہ نے کہا کہ ملک کی حالات بدترین دور سے گزررہاہے،اس کامقابلہ کرنے کیلۓ خواتین کوبھی گھر سے باہر آناہوگا اور اس سرکارکی مخالفت میں سڑک پراتر کرہلہ بول کرناہوگا،آج ہماری بہنیں شاہین باغ میں اس قانون کی مخالفت میں اس کڑاکے کی سردی کودر کنار کرتے ہوۓ قربانی دینے تک کیلۓ عہد کرچکی ہیں.مبشرہ ھما نے کہا کہ ہم ہندوستانی ہیں ہمیں کوئ بھی ہندومسلم میں نہیں بانٹ سکتا.اور اس قومی یکجہتی کی مثال کو بھی برباد نہیں کرسکتا موجو سرکار نے جس طرح ہندوستان کے باشندگان کو سڑک پر اتار دیاہے یہاں کی عوام اسے ضرور بدلہ لے گی.اس پروگرام کو کامیاب بنانے میں یکہتہ واطراف کے نوجوان پیش پیش رہے اور کم وقت میں وہ بھیڑ جمع کردیا جس سے میدان بھی تنگ نظرآرہاتھا نوجوان کمیٹی میں عاشق حسین،ابواللیث ،ناصرجمال،قاری وصی،دلشاد احمد،خالد حسین،محمدزیدی ،قاری کلیم اللہ پیش پیش تھے علماۓ کرام نے بھی سامعین سے خطاب کیا اور موجودہ قوانین کے تیئں مکمل معلومات فراہم کیا جن میں حسیب الرحمان قاسمی ،مفتی ذکی ،ومنظور احمدشمشی و قاضی رضوان کانام شامل ہے نظامت کے فرائض درافشاں نے دیا اور مزید کہا کہ اگر حکومت ہماری بات نہیں مانے گی تو ہمارے گاؤں میں گلزار باغ موجود ہے وہاں ہم لوگ غیر معینہ دھرنہ پر بیٹھیں گے.یہ خبر اشتیاق احمدندوی ازہری نے دی……

مزید پڑھیں

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

جواب دیجئے

Close