دیوبند

مدنی آئی ہاسپٹل دیوبند میں فری آئی کیمپ کے تحت مریضوں کے فیکومشین کے ذریعہ آپریشن کئے گئے

دیوبند ؛19؍ جنوری(رضوان سلمانی) مدنی آئی ہاسپٹل دیوبند میں فری آئی کیمپ کے تحت دوسرے مرحلہ میں 19؍ جنوری بروز اتوار مریضوں کے فیکومشین کے ذریعہ آپریشن کئے گئے اور فولڈ بل لینس لگائے گئے۔ واضح ہوکہ گزشتہ 9؍جنوری کو مولانا حسیب صدیقی مرحوم کی یاد میں حسیب صدیقی میموریل سوسائٹی کی جانب سے ایک روزہ فری آئی کیمپ لگایاگیا تھا، جانچ کے دوران میڈیکل ٹیم نے 77؍مریضوں کا آپریشن کیا جانا طے کیا تھا 12؍جنوری کو پہلے مرحلہ میں 21؍مریضوں کے آپریشن کئے گئے تھے ، اسی طرح 19؍ جنوری کو دوسرے مرحلہ کے تحت صبح 8؍ بجے سے شام 6؍ بجے تک ماہر آئی سرجن ڈاکٹر راجیش گرگ کی قیادت میں میڈکل ٹیم نے 19؍ جنوری کو مدنی آئی ہاسپٹل میں فیکو مشین کے ذریعہ بغیر ٹانکوں کے آپریش کئے گئے اور فولڈ بل لینس لگائے گئے۔ مدنی آئی ہاسپٹل کے انچارج اسرار احمد فاروقی نے بتایا کہ دوسرے مرحلہ کے تحت جن 26؍مریضوں کے کے آپریشن کئے گئے ہیں ان میں بیشتر کا تعلق دیوبند سے ہے اس کے علاوہ قریبی دیہی علاقوں راجوپور، نونابڑی اور بنھیڑہ گائوں کے مریضوں کے بھی آپریشن کئے گئے۔ آپریشن کے بعد ڈاکٹر راجیش گرگ نے تمام مریضوں کواحتیاطی تدابیر بتاتے ہوئے کہا کہ موسم کی شدت کے باعث زیادہ احتیاط کی ضرورت ہوتی ہے ، انہوں نے بتایا کے عام طور پر آنکھوںکے آپریشن کے بعد درد اور خارش دونوں ہوتی ہیں، نیز سر میں درد بھی ہوجاتا ہے اس کے علاوہ ابتدائی ایام میں روشنی کم رہتی ہے لیکن ان علامات سے گھبرانے کی ضرورت نہیں ہے، انہوں نے مریضوں کو مشورہ دیا کہ آنکھوں پر کالا چشمہ لگائے رکھیں، سوتے وقت بھی چشمہ نہ اُتاریں اور اس بات کا خاص خیال رکھیں کہ آپریشن کے بعد ورزش وغیرہ نہ کریں اور ڈرائیونگ سے بھی احتیاط برتیں، انھوں نے موتیا بند سے بچائو کی تدابیر بتاتے ہوئے کہا کہ مستقل بہتر غذائوں کا استعمال کریں وِٹامن سی اور وِٹامن ای والی غذائیں بھر پور طریقہ سے کھائیں، خاص طور پر انڈوں کا استعمال موتیابند سے بچائے رکھتا ہے۔ ڈاکٹر راجیش گرگ نے مریضوں کو صلاح دی کہ تمباکو نوشی سے پرہیز کریں، کیوں کہ اس سے آنکھوں میں فری ریڈیکلز پیدا ہوتے ہیں جو آنکھوں کی شریانوں کو نقصان پہنچاتے ہیں، ڈاکٹر راجیش گرگ کے علاوہ ڈاکٹر شہزاد انجم، ڈاکٹر فرزانہ، اسرار احمد اور محمد طارق نے بھرپور تعاون کیا۔ آپریشن کے بعد مریضوں کو مفت دوائیں بھی دی گئیں۔

مزید پڑھیں

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

جواب دیجئے

Back to top button
Close
Close