بہار و سیمانچل

جمعیۃ علماء کشن گنج کے زیر اہتمام سیمینار کا انعقاد، مولانا اسرارالحق قاسمی اور دیگر اکابر جمعیۃ کو خراج عقیدت پیش کیا گیا

کشن گنج: 15 دسمبر (پریس ریلیز) حضرت مولانا اسرارالحق قاسمی نے پوری زندگی اکابر جمعیت علمائے ہند کی روایت پر عمل کرتے ہوئے امت کی فلاح اور ان کے اتحاد و اتفاق کے لیے جدوجہد کرتے ہوئے گزاری۔ان خیالات کا اظہار جمعیۃ علمائے کشن گنج کے زیر اہتمام اکابر جمعیت کی حیات و خدمات پر منعقدہ سمینار میں خطاب کرتے ہوئے مولانا اسرارالحق قاسمیؒ کے خادم خاص اور دارالعلوم اسراراریہ سنتوشپور کے مہتمم مولانا نوشیر احمد نے کیا۔انہوں نے کہاکہ آپ کی ایک بڑی خوبی یہ تھی کہ عملی اور فکری اعتبار سے آپ نہایت بڑی سوچ کے حامل تھے،وہ ہمیشہ مسلمانوں میں اتحاد و اتفاق قائم کرنے اور مل جل کر ملت کے مسائل کو حل کرنے پر زور دیاکرتے تھے۔ ان کے ذہن میں ذرابھی مسلکی یا فکری تنگی نہ تھی،وہ ہر ایک سے کشادہ دلی کے ساتھ ملتے تھے اور خندہ پیشانی کا مظاہرہ کرتے تھے،انھوں نے ہمیشہ مسلمانوں کے مجموعی اور عمومی مسائل پر توجہ دی۔اس لیے کبھی بھی وہ کسی مسلکی دائرے میں مقید نہیں رہے،وہ اجتماعی طورپر تمام مسلمانوں کی فلاح چاہتے تھے اور پوری زندگی انھوں نے پوری قوم کی پسماندگی کو دور کرنے کے لیے جدوجہد کی،ان کی اسی فطرت کی وجہ سے انھیں مسلمانوں کے ہر طبقے میں غیر معمولی مقبولیت حاصل تھی اور ہر طبقے میں وہ یکساں احترام کی نظر سے دیکھے جاتے تھے۔مولانانوشیر نے کہاکہ وہ عموماً سیاسی مفادات کو پس پشت ڈال دیتے تھے اور اکثر کہاکرتے تھے کہ میں پہلے عالم ہوں اور بعد میں ایم پی ہوں،ان کی زندگی اور کردار میں مجاہد ملت مولاناحفظ الرحمن کی تربیت کا خاص اثر تھا۔ بحیثیت ایم پی کے انہوں نے غیرمسلموں کے ساتھ بھی کوئی تفریق نہیں کی اسی وجہ سے غیر مسلموں میں بھی انھیں بہت زیادہ مقبولیت حاصل تھی، وہ لوگ اکثروبیشتر انہیں اپنے پروگراموں میں مدعوکرتے تھے اور مولانا ان کے پروگراموں میں تبلیغی و دعوتی نقطہئ نظر سے پابندی سے شرکت بھی کرتے تھے، وہ کہاکرتے تھے کہ مٹھی بھر لوگ اور فاشسٹ طاقتیں ملک کا ماحول خراب کرنا چاہتی ہیں ورنہ ملک کا عام ہندوسیکولرمزاج کاحامل ہے اور وہ مل جل کر زندگی گزارنا چاہتاہے۔قبل ازاں دارالعلوم دیوبند کے استاذحدیث مفتی یوسف تاؤلوی نے خطاب کرتے ہوئے جمعیت علماء ہند کی خدمات پر روشنی ڈالی اور کہاکہ جمعیت نے ہر دور میں مسلمانوں کی رہنمائی کی ہے اور آج بھی ہر نازک موڑ پر جمعیت علماء مسلمانوں کی قیادت کا فریضہ انجام دے رہی ہے۔مدرسہ شاہی مرادآباد کے استاذحدیث مفتی سلمان منصورپوری نے بھی جمعیت کی تاریخ کا تذکرہ کرتے ہوئے اکابر جمعیت کی خدمات اور ان کی قربانیوں کو یاد کیا۔جمعیت علماء کے سکریٹری مولاناحکیم الدین نے بھی اظہارخیال کرتے ہوئے اکابر جمعیت کوخراج عقیدت پیش کیا۔اس پروگرام میں جمعیۃ علماء بہار کے ناظم اعلیٰ مولانا محمد ناظم، مولانا محمد خالد انور پورنوی ناظم تنظیم وترقی جمعیہ علما بہار، مولانا سمیر الدین لوہیاکاندر، مولانا عابد انور، مولانا محسن اعظم کنوینر جمعیۃ علماء ہند، مفتی محمد عیسیٰ جامی قاسمی وغیرہم تشریف فرماتھے، مولانا محمد خالد انور جنرل سکریٹری جمعیٖۃ علماء کشن گنج نے آئے مہمانان کرام کا شکریہ ادا کیا اور اس پروگرام کے صدر مولانا محمد غیاث الدین قاسمی کی گفتگو پر مجلس اپنے اختتام کو پہنچی۔

مزید پڑھیں

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

جواب دیجئے

Close