اہم خبریں

نشان زد 5 زمینوں کو اقبال انصاری نے نامناسب بتایا! کہا، تنازعہ ختم ہوا تو مسلمانوں کا بھی خیال رکھیں

ایودھیا۔ ۱۶؍جنوری: بابری مسجد کیس میں فریق رہے اقبال انصاری نے جمعرات کو کہا کہ، جلد ہی رام مندرکی تعمیر شروع ہونے والی ہے۔ابھی مسجدکے لیے بھی زمین حکومت کو مہیا کرا دینی چاہیے۔لیکن زمین مفید مقام پر ملنی چاہیے۔ انہوں نے کہاہے کہ یوگی حکومت نے ابھی تک جن زمینوں کو مسجد کے لیے نشان زدکیا ہے، وہ مناسب نہیں ہے۔اقبال انصاری نے اپنے گھر کے سامنے خالی پڑی زمین کو مسجدکے لیے منتخب کرنے کی تجویز دی ہے۔اقبال انصاری نے کہا وہ چاہتے ہیں کہ پانچ ایکڑ زمین میں مسجد کے ساتھ اسکول کالج ہسپتال اور سرودھرم شالہ بنے، جس سے آگے کوئی تنازعہ نہ کھڑا ہو۔انھوں نے کہاہے کہ ہم کوئی بہت بڑی اور خوبصورت مسجد نہیں بنانا چاہتے۔انصاری نے کہا مندر کی تعمیر شروع ہونے ووالیہے، اب مسجد کی زمین کو بھی نشان زد کر دیناچاہیے۔ ہم صرف یہی چاہتے ہیں کہ سپریم کورٹ نے مسجد کے زمین کو لے کر حکم دیا ہے، اس کا صحیح طریقے سے عمل ہوناچاہیے۔یہ زمین مفید مقام پر طے ہونی چاہیے۔انھوںنے کہاہے کہ ہندوستان سے ایک تنازعہ ختم ہوا تو مسلمانوں کا بھی خیال رکھا جائے۔سب لوگ اب پوچھ رہے کہ مسجد کی زمین کہاں ہے؟ حکومت مندر اور مسجد کی تعمیر میں تعاون کرے۔ویسے مجھ کسی سرکاری افسر نے کوئی رابطہ نہیں کیا ہے۔

مزید پڑھیں

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

جواب دیجئے

Back to top button
Close
Close