اہم خبریں

جے این یو نے جزوی طور پر ہاسٹل فیس میں اضافہ واپس لیا

جے این یو نے جزوی طور پر ہاسٹل فیس میں اضافہ واپس لیا

نئی دہلی، 13نومبر (یو این آئی) جواہر لال نہرو یونیورسٹی (جے این یو)کی ایکزکیوٹیو کمیٹی نے گزشتہ کچھ دنوں سے جاری طلبا کی تحریک کے پیش نظر فیس میں اضافہ کے بڑے حصہ کو جزوی طور پر واپس لینے کا فیصلہ کیا ہے جس کی وجہ سےطلبا ابھی بھی مشتعل ہیں۔
جے این یو ٹیچر ایسوسی ایشن نے بھی انتظامیہ کے اس فیصلے پر عدم اطمینان کا اظہار کیا ہے۔ جے این یو انتظامیہ نے کمزور طبقے کے طالب علموں کے لئے ہاسٹل کے کمرے کے کرایہ اور بجلی پانی کے بل ، میس اور صفائی کی سروس میں 50 فیصد کی چھوٹ دی ہے لیکن جن طالب علموں کو جونیئر فیلو شپ یا سینئر فیلو شپ یا اس کے برابر کوئی دیگر فیلوشپ ملتی ہے تو ان کے لئے یہ رعایت لاگو نہیں ہو گی۔ جن طالب علموں کو نان نیٹ فیلوشپ یا ایم سی ایم فیلوشپ ملتی ہے انہیں بھی 50 فیصد کی چھوٹ ملے گی۔
انتظامیہ کی طرف سے جاری ریلیز کے مطابق 11 بجے رات تک ہاسٹل میں لوٹنے کے فیصلے کو واپس لے لیا ہے اور ڈائننگ ہال میں ڈریس کوڈ کو لاگو کرنے کے فیصلے کو بھی واپس لے لیا ہے لیکن میس بل اور دیگر اخراجات میں اضافہ کو واپس نہیں لیا ہے۔ خط افلاس سے نیچے والے طالب علموں کے لئے ہاسٹل کمرے کے کرائے میں اور پانی بجلی کے بل میں 50 فیصد کی چھوٹ دی ہے۔معاشی طور پر کمزور طالب علموں کو فی سمسٹر 1100 روپے دینے ہوں گے اور ہر سال 250 برتن کے لئے اور 50 روپے اخبارات کے لئے دینے ہوں گے۔ میس کا خرچ بھی حقیقی شرح کے حساب سے وصول کیا جائے گا۔

مزید پڑھیں

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

جواب دیجئے

Close