اہم خبریں

راہل گاندھی کے خلاف توہین عدالت کی درخواست پر جمعرات کوفیصلہ

راہل گاندھی کے خلاف توہین عدالت کی درخواست پر جمعرات کوفیصلہ

نئی دہلی، 13 نومبر (یواین آئی) سپریم کورٹ سبري مالا اور رافیل سودا معاملوں میں دائر نظر ثانی درخواستوں کے علاوہ کانگریس کے سابق صدر راہل گاندھی کے ‘چوکیدار چور ہے’ والے بیان پر دائر توہین عدالت کی عرضی پر جمعرات کو فیصلہ سنائے گا۔
سپریم کورٹ کی ویب سائٹ پر بدھ کو دو الگ الگ نوٹس جاری کرکے دونوں معاملات کو فیصلہ کے لئے کل درج کئے جانے کی اطلاع دی گئی ہے۔واضح رہے کہ عرضی بی جے پی رہنما میناکشی لیکھی نے دائر کی ہے۔ میناکشی لیکھی کی جانب سے کہا گیا کہ یہ عدالت کی توہین ہے۔ راہل گاندھی نے کورٹ کے فیصلے کی غلط تشریح کی ہے۔
چیف جسٹس رنجن گوگوئی کی صدارت والی پانچ رکنی آئینی بنچ سبري مالا مندر میں خواتین کی رسائی کی اجازت کے حکم کے خلاف دائر نظر ثانی درخواست پر فیصلہ سنائےگي۔ آئینی بنچ میں جسٹس گوگوئی کے علاوہ جسٹس روهنگٹن فلی نریمن، جسٹس اے ایم كھانولكر، جسٹس ڈی وائی چندرچوڑ اور جسٹس اندو ملہوترا شامل ہیں۔
چیف جسٹس کی قیادت والی تین رکنی بنچ رافیل جنگی طیارہ معاہدہ معاملہ کی آزادانہ تحقیقات نہ کرائے جانے کے فیصلہ کے خلاف سابق وزیر خزانہ یشونت سنہا اور دیگر کی نظر ثانی کی درخواست پر فیصلہ دے گی۔ اس بنچ میں جسٹس سنجے کشن کول اور جسٹس کے ایم جوزف شامل ہیں۔اسی بنچ نے ہی مسٹر گاندھی کے خلاف توہین عدالت کی عرضی کی سماعت کی تھی۔

مزید پڑھیں

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

جواب دیجئے

Close