اہم خبریں

کشمیر میں بنگال کے مزدوروں کی موت پر وزیر داخلہ خاموش کیوں ہیں : ممتا

کشمیر میں بنگال کے مزدوروں کی موت پر وزیر داخلہ خاموش کیوں ہیں : ممتا
کولکتا ۔ 31 اکتوبر 2019
وزیراعلیٰ ممتابنرجی نے کشمیرمیں بنگال کے مزدوروں کی موت پر وزیرداخلہ امت شاہ پر تنقید کرتے ہوئے کہا کہ بڑی بڑی باتیں کرنے والے لوگوں کے پاس بولنے کے لیے اب کچھ بھی نہیں ہے۔

مغربی بنگال کی وزیراعلیٰ ممتابنرجی نے کشمیر میں بنگال کے مزدوروں کی موت پر وزیرداخلہ امت شاہ پر تنقید کر تے ہوئے کہا کہ بڑی بڑی باتیں کرنے والے لوگ آج خاموش کیوں ہیں؟

ترنمول کانگریس کی سربراہ ممتابنر جی نے کشمیر میں دہشت گردوں کے حملے میں بنگال کے پانچ مزدوروں کی موت پروزیرداخلہ امت شاہ پر تنقید کرتے ہوئے کہاکہ کشمیر میں بنگال کی حکمت عملی ناکام ہو چکی ہے۔

انہوں نے کہاکہ کشمیر میں ہلاک ہونے والے بنگال کے پانچ مزدور کام کرنے کے لیے وہاں گیے تھے۔ انہیں کیوں مارا گیا اس کا جواب وزیرداخلہ کے پاس نہیں ہے۔

وزیراعلیٰ نے کہاکہ امت شاہ بڑی بڑی باتیں کرتے ہیں۔ سیاست کے نام پر لوگوں کو ڈرا دیتے ہیں۔لوگوں ڈرانے اور مذہب کے نام پر سیاست کرنے والے لوگ خاموش ہیں۔

ترنمول کانگریس کی سربراہ کے مطابق مغربی بنگال ملک کی تمام ریاستوں میں سب سے پرامن ریاست ہے۔ چند لوگوں کی تمام تر کوششوں کے باوجود بنگال نفرت کی آگ سے اب تک پاک ہے۔

انہوں نے کہاکہ مغربی بنگال میں اتر پردیش اور بہار کے لوگوں کوبنگال میں کسی بھی طرح کی پریشانیوں کاسامنا نہیں ہے۔ مگر مغربی بنگال کے لوگوں کو ملک کی دیگر ریاستوں میں تشدد کا سامنا کرنا پڑرہاہے۔

ممتابنرجی نے کہاکہ یہ سب ایک سیاسی جماعت کے اشارے پر ہورہاہے۔عام لوگوں کی موت پر سیاست کرنے والی جماعت کوصرف اور صرف اقتدار سے محبت ہےاور اس کے لیے وہ کچھ بھی کرسکتی ہے۔

وزیراعلیٰ نے مزید کہاکہ لوگوں کو اب سب کچھ سمجھ آگیا ہے۔ وہ گمراہ کرنے والی سیاسی جماعت کی باتوں میں اب نہیں آ سکتے ہیں۔

مزید پڑھیں

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

جواب دیجئے

Close