اہم خبریں

12 ستمبر کو جمعیت علماء کی مجلس عاملہ کی اہم میٹنگ : دستور میں تبدیلی کا امکان !

12 ستمبر کو جمعیت علماء کی مجلس عاملہ کی اہم میٹنگ : دستور میں تبدیلی کا امکان !
2019نئی دہلی ۔ 11 ستمبر
ملک بھر میں بدلتے سیاسی منظر نامے کا اثر جمعیت علما ہند پر بھی نظر آرہا ہے، جمعیت علما نے برادران وطن کو جمعیت کی رکنیت دینے کے لیے اپنے دستور میں تبدیلی کا اشارہ دیا ہے۔

قومی سیاسی منظرنامہ سے ملی تنظیموں پر بھی اثرات مرتب ہونے لگے ہیں جس کے سبب ملک کی سب سے بڑی مسلم تنظیم جمعیت علماء ہند نے غیر مسلم طبقہ کے افراد کو بھی جماعت کی رکنیت دینے کے لیے اپنے دستور میں تبدیلی کا اشارہ دیا ہے۔

قومی دارالحکومت دہلی میں 12 ستمبر کو جمعیت علما کی مجلس عاملہ کی میٹنگ ہے جس میں برادران وطن کو بھی جمیعت کی رکنیت دینے نیز انہیں تنظیم کا حصہ بنانے کی تجویز پیش کی جائے گی۔

واضح رہے کہ جمعیت علما کے دستور کے مطابق کوئی غیر مسلم فرد تنظیم کا حصہ نہیں بن سکتا لیکن اب اس دستور میں ترمیم کا منصوبہ بنایا کیا گیا ہے جس کے تحت برادران وطن بھی اس تنظیم کا حصہ بن سکتے ہیں۔

اس تعلق جب جمعیت علما کے جنرل سکریٹری مولانا محمود مدنی سے بات کرنے کی کوشش کی تو ان سے رابطہ نہیں ہو سکا تاہم مولانا کے قریبی ذرائع نے اس منصوبہ کی تصدیق کی ہے۔

ذرائع نے مزید بتایا کہ جمعیت نے دینی مدارس کی جدید کاری کے منصوبہ پر بھی اپنے موقف میں تبدیلی کا ارادہ بنایا ہے، واضح رہے کہ جمیعت علماء اب تک مدارس میں ماڈرنائزیشن اسکیموں کی مخالفت کرتی آئی ہے لیکن اب ممکن ہے کہ وہ اس جدید کاری اسکیم کی حمایت کر سکتی ہے۔ اس تعلق سے جمعیت علماء ہند 12 ستمبر کو مجلس عاملہ کی میٹنگ میں یہ تجاویز پیش کرے گی۔

مزید پڑھیں

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

جواب دیجئے

Close