اشعار و غزل

 حالاتِ حاضرہ پر ایک نظر ! از قلم۔ عامر قمر سالار پوری

حالاتِ حاضرہ پر ایک نظر

خادم بھی ہمی ہیں یہاں مخدوم بھی ہم ہیں
ظالم بھی ہمی ہیں یہاں مظلوم بھی ہم ہیں
ہم نے ہی دیئے تھے انہیں اسباق محبّت
مجروحِ طبیعت سرِ مقسوم بھی ہم ہیں
حالات نے اپنے ہی گرایا ہے زمیں پر
غمخوار بھی ہم ہیں یہاں مغموم بھی ہم ہیں
تقدیر خفا ہے نہ یہ غیروں کی خطا ہے
افعال ہمارے ہیں تو مفہوم بھی ہم ہیں
اب بابری مسجد پہ تم آنسو نہ بہاؤ
معمار بھی ہم ہیں سرِ مهدوم بھی ہم ہیں
ہو جائے قمر کاش بشاشت کی نظر بھی
محروم کی فہرست میں مرقوم بھی ہم ہیں
   از قلم۔ عامر قمر سالار پوری
   رابطہ نمبر۔6396567639
مزید پڑھیں

Urdutimes@123

ہندوستان اردو ٹائمز پر آپ سب کا خیر مقدم کرتے ہیں

متعلقہ خبریں

جواب دیجئے

Close